سائنس فکشن فلم ’مورٹل انجنز‘ کا پہلا ٹریلر جاری،14دسمبر کو سنما گھروں کی زینت بنے گی

بدھ جون 16:24

لاس اینجلس(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 جون2018ء) لارڈز آف دی رِنگز اور دی ہوبٹ جیسی بلاک بسٹر فلمیں دینے والے نیوزی لینڈکے معروف پروڈیوسر پیٹر جیکسن کی ایڈونچر اور ایکشن سے بھرپور نئی سائنس فکشن فلم ’مورٹل انجنز‘ کا پہلاٹریلر منظر عام پر آگیا ہے۔ہدایتکار کرسٹیان ریوًرز کی اس سنسنی خیز فلم کی کہانی ایک ایسے دور کی عکاسی کر رہی ہے جب دنیا میں تباہی سے دوچار ہو جاتی ہے اور وسائل نہ ہونے کے برابر رہ جاتے ہیں۔

ایسے حالات میں انسانوں کی بقا شدید خطرات کا شکار ہو جاتی ہے اور لوگ موبائل شہروں کی صورت میں زندگی بسر کرنے پر مجبور ہو جاتے ہیں تاکہ مسلسل سفر کرتے ہوئے دنیا میں رہ جانے والے محدود وسائل سے فائدہ اٴْٹھا سکیں تاہم ایسے میں ہواؤں میں اٴْڑان بھرتے اورایک جگہ سے دوسری جگہ سفر کرتے شہربھی ایک دوسرے سے جنگ کا اعلان کردیتے ہیں۔

(جاری ہے)

برٹش ناول نگارفلپ ریو کے مشہور ناول پر مبنی اس فلم کو پیٹر جیکسن ، ڈیبوراہ فورٹ ، فرین والش نے پروڈیوس کیا ہے جبکہ فلم کا اسکرین پلے بھی پیٹر جیکسن پیش کر رہے ہیں، اس کے علاوہ فلم کی کاسٹ میں ہالی وڈ اداکار ہو گو ویونگ، رابرٹ شیہان، ہیرا ہلمر، جیہائی، رونن ریفٹیری، لائیلا جارج، پیٹرک ملاہائیڈ اور اسٹیفن لینگ سمیت کئی فنکار اہم کرداروں میں جلوہ گر ہو رہے ہیں۔

بقا کی جنگ لڑتے انسانوں کے گِرد گھومتی یہ سنسنی خیز سائنس فکشن ایکشن فلم 100 ملین ڈالر لاگت سے بنائی گئی ہے جبکہ فلم کی عکسبندی نیوزی لینڈ اور امریکا میں مکمل کی گئی ہے۔ایڈونچر سے بھرپور یہ فلم رواں سال 14دسمبر کو سنیما گھروں میں دھوم مچانے آرہی ہے۔