پشاور ہائی کورٹ مینگورہ بینچ نے سوات کی تین قومی اور پانچ صوبائی حلقہ بندیوں پر نظر ثانی کا فیصلہ سنادیا

بدھ جون 20:18

سوات(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 جون2018ء) پشاور ہائی کورٹ مینگورہ بینچ نے سوات کی تین قومی اور پانچ صوبائی حلقہ بندیوں پر نظر ثانی کا فیصلہ سنادیا ،،حلقہ این اے ٹو ،تین ،اور چار جبکہ صوبائی حلقہ پی کے چار ،پانچ ،چھ ، سات اور آٹھ شامل ہیں ،ججز نے الیکشن کمیشن کو ان حلقہ بندیوں پر نظرثانی کا حکم دیدیا ،تفصیلات کے مطابق پشاور ہائی کورٹ کے دو رکنی بینچ جسٹس قلند رعلی خان اور جسٹس غضنفر علی نے سوات کے تین قومی اور پانچ صوبائی حلقوں کے حلقہ بندیوںپر فیصلہ سناتے ہوئے الیکشن کمیشن آف پاکستان سے نظرثانی کرنے کا حکم صادر کیا جن حلقوںکی حلقہ بندیوں پر نظر ثانی کا حکم جاری کیا گیا ہے اُن میں این اے دو ،این اے تین اور این اے چار کے علاوہ صوبائی اسمبلی کے حلقہ چار ،پانچ ،چھ ،سات اور آٹھ شامل ہیں پشاور ہائی کورٹ میں حلقہ بندیوںکے خلاف حیدرعلی خا ن،نوید علی ،گوہر زمان ،طارق خان ،ثناء اللہ اور سلیم خان نے کیس دائر کیا تھا۔

(جاری ہے)

جبکہ کیس کی پیروی جہانزیب نفیس ایڈوکیٹ ،اورنگزیب ایدوکیٹ ،عنایت خان،حق نواز مجاہد فاروق،محمد نبی اور شیر محمد خان ایڈوکیٹ نے کی۔