جمائمہ کا ریحام خان کی کتاب پرمقدمہ دائر کرنے کا اعلان

یقین ہے کہ ریحام خان کی کتاب برطانیہ میں شائع نہیں ہوسکتی،کتاب اگر برطانیہ میں شائع ہوئی توبیٹے کے ذریعے ریحام خان پرمقدمہ کروں گی۔ چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کی سابقہ اہلیہ جمائمہ گولڈاسمتھ کاٹویٹ

sanaullah nagra ثنااللہ ناگرہ بدھ جون 19:22

جمائمہ کا ریحام خان کی کتاب پرمقدمہ دائر کرنے کا اعلان
لاہور(اُردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔06 جون 2018ء) : تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کی سابقہ اہلیہ جمائمہ گولڈاسمتھ نے ریحام خان کی کتاب میں بیٹے پر الزامات لگانے پرمقدمہ دائر کرنے کا اعلان کردیا ہے۔انہوں نے کہا کہ ریحام خان کی کتاب اگر برطانیہ میں شائع ہوئی توبیٹے کے ذریعے ریحام خان پرمقدمہ کروں گی۔ میڈیا رپورٹس کے مطابق تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کی سابقہ اہلیہ جمائمہ نے اپنے ٹویٹ میں کہا کہ یقین ہے کہ ریحام خان کی کتاب برطانیہ میں شائع نہیں ہوسکتی،کتاب شائع ہوئی توبیٹے کے ذریعے ریحام خان پرمقدمہ کروں گی۔

واضح رہے ریحام خان نےاپنی جلد شائع ہونے والی کتاب میں جہاں عمران خان کے بیٹے قاسم پر منشیات فروشی میں ملوث ہونے کے الزامات لگائے،،ریحام خان نےمبینہ طورپرالزام لگایا کہ عمران خان کے صاحبزادے قاسم منشیات فروشی میں ملوث ہیںاسی طرح ریحام خان نے اپنی کتاب میں عمران خان کے قریبی ساتھیوں زلفی بخاری ، وسیم اکرم اور انیلہ خواجہ پر جنسی نوعیت کے الزامات عائد کیے ہیں۔

(جاری ہے)

اپنی کتاب میں ریحام خان نے اپنے سابق شوہر اعجاز رحمان پر بھی الزامات عائد کیے۔ ان چاروں افراد کی جانب سے ریحام خان کو قانونی نوٹس بھجوا دیا گیا ہے۔ نوٹس میں ریحام خان سے 14 جون تک جواب طلب کیا گیا ہے۔نوٹس میں کہا گیا کہ ریحام خان نے اپنی کتاب میں پہلی شادی کا ذمہ دار اعجاز رحمان کو قراردیا۔ صفحہ 243،417 اور 458 پر انیلہ خواجہ پر عمران خان کے ساتھ تعلقات کا الزام عائد کیا گیا ہے۔

کتاب میں انیلہ خواجہ کو چیف آف حرم قرار دیا گیا۔ صفحہ 402 اور 572 پر وسیم اکرم کی مرحومہ بیوی سے متعلق نہایت گھناؤنے الزامات عائد کیے گئے ہیں۔ دوسری جانب تحریک انصاف کی بین الاقوامی میڈیا کوآرڈینیٹرانیلہ خواجہ نے ریحام خان کی کتاب پراپنے ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے تمام الزامات کو بے سروپا قرار دے دیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں صرف وطن کی محبت میں آئی تھی۔انیلہ نے کہا کہ ریحام خان جتنے مرضی الزام لگا لے میں اپنا مشن جاری رکھوں گی۔تحریک انصاف میرے کام کی اور میری عزت کرتی ہے۔