شدید طوفان سے متاثر ہونے والی بجلی کی سپلائی مسلسل کئی گھنٹوں کی کوششوں کے بعد بحال کر لی گئی

افطاری کے بعد سحری میںبھی بجلی کی بندش سے روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا ،ٹیوب ویل نہ چلنے سے پانی کی قلت

بدھ جون 22:15

لاہور/مریدکی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 جون2018ء) لاہور اور گردونواح میں منگل کے روز آنے والے شدید طوفان سے متاثر ہونے والی بجلی کی سپلائی مسلسل کئی گھنٹوں کی کوششوں کے بعد بحال کر لی گئی ، افطاری کے بعد سحری میںبھی بجلی کی بندش سے روزہ داروں کو شدید مشکلات کا سامنا رہا ،ٹیوب ویل نہ چلنے سے پانی کی قلت بھی پیدا ہو گئی ۔ تفصیلات کے مطابق لاہور اور اس کے گردونواح میں منگل کی شام اچانک آنے والے شدید طوفان کی وجہ سے کئی مقامات پر درخت اورہورڈنگز بورڈزبجلی کی تاروں پر گرنے اور بارش کی وجہ سے فیڈرز ٹرپ ہونے سے بجلی کا نظام درہم ہو گیا تھا ۔

بارش تھمنے کے فوری بعد لیسکو کے فیلڈ سٹاف نے بجلی بحالی کے لئے آپریشن کا آغاز کیا اور مرحلہ وار بجلی بحال کی جاتی رہی جبکہ مسلسل کئی گھنٹوں کی کوششوں کے بعد کئی علاقوں میں بدھ کے روز تین بجے تک بجلی بحال ہوئی ۔

(جاری ہے)

بجلی کی بندش کی وجہ سے شہریوں نے منگل کے روز افطاری اور بعدازاں سحری بھی اندھیرے میں کی جبکہ پانی کی بندش کی وجہ سے پانی کی بھی شدید قلت رہی ۔

ٹیوب ویل نہ چلنے سے مساجد میں وضو کے لئے بھی پانی بھی دستیاب نہ تھا ۔علاوہ ازیں مریدکے سے نامہ نگار کے مطابق مریدکے اور گرد و نواح میں شدید طوفان کے باعث کئی علاقوں میں 24گھنٹے گزرنے کے باوجود بجلی کی سپلائی بحال نہ ہو سکی تاہم محکمہ بجلی کے عملے کی جانب سے کاوشیں جاری ہیں۔مریدکے شہر سمیت ملحقہ علاقوں میں تقریباً بارہ گھنٹے کی تگ و دائو کے بعد بجلی بحال کر لی گئی ۔۔

متعلقہ عنوان :