کالا باغ ڈیم کی بحث فیڈریشن سے کھیلنے کے مترادف ہے ،ْخورشید شاہ

جمعرات جون 14:37

کالا باغ ڈیم کی بحث فیڈریشن سے کھیلنے کے مترادف ہے ،ْخورشید شاہ
سکھر (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 جون2018ء) قومی اسمبلی میں سابق قائد حزب اختلاف اور پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنما سید خورشید احمد شاہ نے اسمبلی کے پانچ سالہ مدت پوری ہونے پر شکر ادا کرتے ہوئے کہا ہے کالا باغ ڈیم کی بحث کو چھیڑنا پاکستان کی فیڈریشن سے کھیلنے کے مترادف ہے۔میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے سید خورشید احمد شاہ کا کہنا تھا کہ پارلیمنٹ نے پانچ سال پورے کیے یہ بڑی کامیابی ہے۔

خورشید شاہ نے کہا کہ یوسف رضا گیلانی کو بھی گھر بھیجا گیا راجہ پرویز اشرف آئے، اصل چیز پارلیمنٹ کی مدت پوری کرنا ہے اور خوشی کی بات یہ ہے کہ ملک میں جمہوریت قائم رہی۔ان کا کہنا تھا کہ پنجاب میں پیپلز پارٹی رزلٹ دکھائے گی اور حکومت بنائے گی۔۔اصغر خان کیس کے حوالے سے بات کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ مذکورہ کیس میں میرا نام غلطی سے آیا تھا لیکن اگر عدالت نے نواز شریف کو بلایا تھا تو انھیں پیش ہونا چاہیے تھا۔

(جاری ہے)

سید خورشید شاہ نے کہا کہ مسائل موجود ہیں جو کہ وقت کے ساتھ آہستہ آہستہ حل ہوجائیں گے۔انھوں نے کہا کہ میری نظر میں سب سے بڑا مسئلہ آبادی اور پانی کا ہے، ہماری اولین ترجیح پانی کے مسئلے کو حل کرنا ہے۔کالاباغ ڈیم کے حوالے سے بات کرتے ہوئے انھوں نے واضح کیا کہ کالاباغ ڈیم کی بحث کو چھیڑنا فیڈریشن سے کھیلنے کے مترادف ہے۔انہوںنے کہاکہ سول ہسپتال سکھر بڑا ہیڈ کوارٹر ہے، دیگر اضلاع سے بھی لوگ آتے ہیں، اس لیے کچھ مسائل ہیں۔