بلوچستان میں ن لیگ کو بڑا دھچکا

سابق وزیراعظم میر ظفر اللہ خان جمالی نے ساتھیوں سمیت پی ٹی آئی میں شمولیت کا عندیہ دے دیا

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان جمعرات جون 14:45

بلوچستان میں ن لیگ کو بڑا دھچکا
کوئٹہ (اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔07جون 2018ء) بلوچستان میں ن لیگ کو بڑا دھچکا لگنے والا ہے۔ سابق وزیراعظم میر طفر اللہ خان جمالی نے ساتھیوں سمیت پی ٹی آئی میں شمولیت کا عندیہ دے دیا.تفصیلات کے مطابق عام انتخابات سے قبل سیاسی جوڑ توڑ اپنے عروج پر ہے،مختلف پارٹیوں سے تعلق رکھنے والے سیاسی رہنما اپنے مفاد کو مدِ نظر رکھ کر پارٹیاں بدل رہے ہیں۔

اور اس حوالے سے تحریک انصاف کا پلڑا سب سے بھاری رہا ہے۔مختصر عرصے کے دوران تحریک انصاف نے مخالفین کی بہت سی وکٹیں اڑائی ہیں۔اور اس سے سب سے زیادہ متاثر ن لیگ ہوئی ہے۔اور اب پاکستان مسلم لیگ ن کو بلوچستان سے بھی ایک بڑا دھچکا لگنے والا ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق سابق وزیراعظم میر طفراللہ جمالی کی تحریک انصاف میں شمولیت متوقع ہے۔

(جاری ہے)

میر طفر اللہ خان جمالی نے ساتھیوں سمیت پاکستان تحریک انصاف میں شمولیت کا عندیہ دے دیا ہے،میڈیا رپورٹس کے مطابق میر ظفر اللہ خان جمالی بلوچستان میں تحریک انصاف کی قیادت کے ساتھ رابطے میں ہیں اور جلد ہی ان سے ملاقات بھی کریں گے۔

میر ظفر اللہ خان جمالی جلد ہی تحریک انصاف بلوچستان کے صدر سردار یار محمد رند سے ملاقات کریں گے،جس کے بعد توقع کی جا رہی ہے کہ میر ظفر اللہ تحریک انصاف میں شمولیت کا اعلان کر دیں۔یار محمد رند نے میر طفر اللہ خان جمالی کی قوم کے لیے خدمات کی تعریف بھی کی ہے۔یاد رہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے چئیرمین عمران خان نے مخالفین کی 100 سے زائد وکٹیں اڑا ئی ہیں۔

دوسری سیاسی جماعتوں کے کئی ایم این اے اور ایم پی اے نے تحریک انصاف میں شمولیت اختیار کی ہے۔ کپتان عمران خان کی تباہ کن باؤلنگ سے کوئی بھی سیاسی جماعت نہ بچ سکی۔مختصر عرصہ میں دوسری جماعتوں کی 100 سے زائد بڑی وکٹیں اڑائیں۔اور ان کو اپنے ساتھ ملا لیا۔ کپتان عمران خان نے پاکستان مسلم لیگ ن ،،پاکستان پپپلز پارٹی،مسلم لیگ ق کی سب سے زیادہ وکٹیں اڑائیں۔