وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر کی کوٹلی آمد

بنیادی لیگی کارکن نے ساتھوں کے ہمراہ وزیر اعظم کے افطار ڈنر سمیت تمام پروگراموں کا بائیکاٹ کر دیا

جمعرات جون 16:12

کوٹلی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 جون2018ء) وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر کی کوٹلی آمد ۔بنیادی لیگی کارکن نے اپنے ساتھوں کے ہمراہ وزیر اعظم کیافطار ڈنر سمیت تمام پروگراموں کا بائیکاٹ کر دیا۔ہولڈر نون لیگ یوسف ملک کی جانب سے دئیے گئے افطارڈنر سے مسلم لیگ نون حلقہ ایک کوٹلی کے کارکنان نے بائیکاٹ کر دیا ۔ شیخ عاشق ارمان کی قیادت میں بائیکاٹ کرنے والوں کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ نون نے کوٹلی شہر کو کے کارکنوں کو بری طرح نظر انداز کیا جارہا ہے۔

مخلص جماعتی ورکروں کے حقوق کا قتل عام کیا جارہا ہے۔کارکنوں کو بے توقیر کرنا نون لیگ حلقہ ایک کے ذمہ داران نے اپنا وطیرہ بنایا ہوا ہے۔ تفصیلات کے مطابق مسلم لیگ نون کوٹلی شہر کے سرگرم کارکن اور تاجر راہنما شیخ عاشق ارمان کی قیادت میں کوٹلی شہر کے کارکنوں نے ملک یوسف کی جانب سے وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر کے اعزاز میں دئیے گے افطار ڈنر میں شرکت سے انکار کرتے ہوئے اپنا احتجاج ریکارڈ کروایا ہے، شیخ عاشق ارمان اور ان کے ساتھیوں کا کہنا ہے کہ حکومت کو بنے دو سال سے زائد عرصہ گزر چکا ہے ۔

(جاری ہے)

اس دوران کوٹلی میں ۹ کروڑ کے فنڈز بذریعہ ٹکٹ ہولڈر تقسیم ہوئے ۔ ضلعی ہیڈ کوارٹر میں درجنوں آسامیوں پر تعیناتیاں ہوئیں مگر کوٹلی شہر کے کارکنان مکمل طور پر نظر انداز کر دیا گیا ہے ۔ کوٹلی اندرون شہر اس وقت ہم پانی بجلی اور دیگر مسائل کا شکار ہیں اورقیادت ہمارا فون تک اٹینڈ نہیں کرتی ۔ عاشق ارمان اور ساتھیوں نیسوشل میڈیا پر بھی مہم چلا رکھی ہے ۔شیخ عاشق ارمان نے الزام لگایا کہ حلقہ ایک میں سیاسی کارکنوں کے روپ میں پیشہ ور سیاسی ٹھگ اور سیاسی مسافر متحرک ہیں۔جو تقر ریوں اور تبادلوں کے نام پر لوگوں کی جیبوں کا سفایا کر رہے ہیں۔ بد کردار عناصر کوٹلی شہر میں ملک یوسف کی ایماء پر لوگوں سے پیسہ بٹوڑ رہے ہیں۔