سپریم کورٹ نے نندی پور پاور پراجیکٹ میں مبینہ کرپشن پر نیب کو تحقیقات کا حکم دے دیا

میڈیا کمیشن کیس نمٹا دیا، نگراں حکومت نے سپریم کورٹ کے حکم پر پیمرا آرڈیننس میں ترمیم کر دی

Mian Nadeem میاں محمد ندیم جمعرات جون 16:18

سپریم کورٹ نے نندی پور پاور پراجیکٹ میں مبینہ کرپشن پر نیب کو تحقیقات ..
اسلام آباد(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین-انٹرنیشنل پریس ایجنسی۔07 جون۔2018ء) سپریم کورٹ نے نندی پور پاور پراجیکٹ میں مبینہ کرپشن پر نیب کو تحقیقات کا حکم دے دیا ہے۔۔سپریم کورٹ میں نندی پور پاور پراجیکٹ کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس نے ریمارکس دیے کہ نندی پور پاور پراجیکٹ میں کرپشن کے معاملے کو دیکھیں گے۔انہوں نے استفسار کیا کہ نندی پور پاور پراجیکٹ کی فائل وزارت قانون میں کتنا عرصہ رہی؟ اس پراجیکٹ میں جو فراڈ ہوا وہ دیکھنا چاہتا ہوں۔

اس موقع پر سیکرٹری توانائی نے کہا کہ 22بلین کا منصوبہ 58 بلین تک جا پہنچا۔۔سماعت کے موقع پر چیف جسٹس نے ملازمین کو تنخواہیں نہ دینے پر بھی برہمی کا اظہار کیا۔دوسری جانب سپریم کورٹ نے6 سال اور100 سماعتوں کے بعدمیڈیا کمیشن کیس نمٹا دیا، نگراں حکومت نے سپریم کورٹ کے حکم پر پیمرا آرڈیننس میں ترمیم کر دی۔

(جاری ہے)

میڈیا کمیشن کیس کی سماعت میں چیف جسٹس نے حکم جاری کیا تھا،درخواست گزار حامد میر نے پیمرا قانون کے سیکشن 5 اور 6 میں ترمیم کا مطالبہ کیا تھا۔

آرڈیننس میں ترمیم کے بعد وفاقی حکومت کسی ٹی وی چینل کو براہِ راست حکم سے بند نہ کرسکے گی، پیمرا پر وفاقی حکومت کا کنٹرول ختم ہو گیا۔آرڈیننس میں ترمیم سے چیئرمین پیمرا کے اختیارات میں اضافہ ہوگیا، جبکہ پیمرا ارکان کی تعداد 11 سے کم کرکے 8 کردی گئی، ان 8 میں سے 5 ارکان غیرسرکاری جبکہ 3 سرکاری ہوں گے۔۔حامد میر نے عدالت سے استدعا کی تھی کہ آرڈیننس جاری ہونے کے بعد کیس نمٹا دیا جائے، پی بی اے کے وکیل اعتزاز احسن نے بھی کیس نمٹانے کی استدعا کی۔۔چیف جسٹس نے فریقین کی استدعا منظور کرتے ہوئے میڈیا کمیشن کیس نمٹادیا۔۔حامد میر نے اس موقع پر کہا کہ 6 سال کے بعد کیس نمٹانے پر عدالت کا شکر گزار ہوں۔