مختلف سیاسی جماعتوں کی خواتین کارکنان کی ریحام خان پرتنقید

جمعرات جون 18:52

مختلف سیاسی جماعتوں کی خواتین کارکنان کی ریحام خان پرتنقید
ملتان۔7 جون(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 07 جون2018ء) مختلف سیاسی جماعتوں سے تعلق رکھنے والی خواتین نے کہا ہے کہ سیاست کے نام پر خواتین کوتضحیک کا نشانہ بنانا مناسب نہیں، اور وہ خواتین بھی قابل مذمت ہیں جوعورت کے تمسخر کاباعث بن رہی ہیں۔ان خیالات کااظہار انہوں نے ریحام خان کی متوقع کتاب اور الزام تراشیوں کے حوالے سے اے پی پی سے بات چیت کرتے ہوئے کیا۔

مسلم لیگ(ن) شعبہ خواتین ملتان کی سٹی نائب صدر و چیئرپرسن سوشل ویلفیئر پبلک فیسلٹیشن کمیٹی افشین بٹ نے کہاکہ خواتین کسی بھی شعبے میں ہوں اپنی عزت کی خودذمہ دار ہوتی ہیں۔خاص طورپر سیاست سے تعلق رکھنے والی خواتین ر ول ماڈل ہوتی ہیں۔انہوں نے کہاکہ ریحام خان نے سستی شہرت حاصل کرنے کے لیے اپنے تقدس کوپامال کیا ہے۔

(جاری ہے)

انہوں نے مزید کہاکہ آج کل ذاتی مفادات کی سیاست ہے اورریحام خان نے اس پر عمل کرتے ہوئے خود کو نمایاں کرنے کی کوشش میں الٹی اپنی تذلیل کروائی ہے۔

پاکستان پیپلزپارٹی سائوتھ پنجاب ونگ کی انفارمیشن سیکرٹری شہناز لودھی نے کہاکہ ہمارے معاشرے میں خاص طبقہ ان مردوں پر مشتمل ہے جوخواتین کو آگے لانا پسند نہیں کرتے اور نہ ہی وہ چاہتے ہیں کہ وہ مردوں کے شانہ بشانہ کام کریں۔لیکن اس کایہ مطلب ہرگز نہیں کہ خواتین کسی کی کردار کشی کرکے شارٹ کٹ کے ذریعے خودکو آگے لائیں اور باقی خواتین کی تذلیل کاباعث بنیں۔

انہو ں نے کہاکہ محترمہ شہید بے نظیر بھٹو نے خواتین کے حقوق کے لیے ہمیشہ آوازبلند کی اور بحیثیت سیاسی خاتون اپنا ایک مقام بنایا۔ماضی میں ہو یا موجودہ سیاسی صورتحال میں بہت سی خوا تین باعزت گھرانوں سے تعلق رکھتی ہیں اور سیاست میں بھی اپنا مقام بنارہی ہیں۔انہوں نے کہاکہ اسلامی کلچر اجازت نہیں دیتا کہ آپ کسی کی تذلیل کریں۔ خواتین سیاست میں اپنامقام اپنے کام کے ذریعے بنائیں۔