وزارت مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی کو اقلیتی برادریوں کے طلباء وطالبات سے وظائف کے لئے 10ہزار سے زائد درخواستیں موصول ہوئی ہیں

ہفتہ جون 13:32

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 09 جون2018ء) وزارت مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی کو اقلیتی برادریوں سے تعلق رکھنے والے طلباء وطالبات کیلئے مختص وظائف کے ضمن میں 10ہزار سے زائد درخواستیں موصول ہوئی ہیں، یہ وظائف پرائمری سے لیکر اعلیٰ اورپیشہ وارانہ تعلیمی اداروں کے طلباء وطالبات کو دئیے جائیں گے۔ وزارت مذہبی امور و بین المذاہب ہم آہنگی کے اقلیتی ونگ کے ایک عہدیدار نے اے پی پی کو بتایا کہ وزارت نے اس سلسلے میں ا قلیتی برادریوں سے تعلق رکھنے والے طلباء وطالبات سے درخواستیں طلب کی تھیں اوراب تک مختلف کیٹیگریز میں 10 ہزار سے زائد طلباء وطالبات نے درخواستیں جمع کرائی ہیں ۔

انہوں نے بتایا کہ ان درخواستوں کی سکروٹنی کا عمل جاری ہے اور سکروٹنی کے بعد مستحق طلباء و طالبات کو 60ہزار روپے سالانہ کی شرح سے وظائف دئیے جائیں گے، اس مقصد کیلئے مجموعی طورپر20.5 ملین روپے مختص کئے گئے ہیں۔

(جاری ہے)

ان وظائف کیلئے وضع کردہ طریقہ کار کے تحت ہندو، سکھ، مسیحی ، بدھ مت اوردیگر اقلیتی برادریوں سے تعلق رکھنے والے وہ طلباء وطالبات درخواست دینے کے اہل ہیں جنہوں نے اپنے آخری سالانہ امتحان میں کم سے کم 50 فیصد نمبرز حاصل کئے ہوں ، اسی طرح درخواست دینے والے طلباء و طالبات کے والدین کی ماہانہ آمدنی 10 ہزارروپے سے زائد نہیں ہونی چاہئیے، اعلی کلاسوں کیلئے درخواستیں دینے والے طلباء کے والدین کیلئے آمدنی کی حد 20 ہزارروپے مقرر کی گئی ہے۔