دُبئی:اماراتی شہری نے ہم وطن نوجوان کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا

ملزم نے صحرا کی سیر کے دوران چاقو دکھا کر اپنے قریبی دوست سے زبردستی کی

Muhammad Irfan محمد عرفان ہفتہ جون 13:34

دُبئی:اماراتی شہری نے ہم وطن نوجوان کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا
دُبئی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔ 9جُون 2018ء) دُبئی کی عدالت میں ایک اماراتی شہری کی جانب سے اپنے ہم وطن دوست کے ساتھ زبردستی جنسی فعل کا ارتکاب کرنے کا مقدمہ زیرِ سماعت ہے۔ تفصیلات کے مطابق 21 سالہ ملزم اپنے 20 سالہ دوست کو سیر کی غرض سے صحرائی مقام الرُویّہ لے گیا جہاں وہ بیٹھے بات چیت کرتے رہے۔ اس دوران ملزم نے جنس کے موضوع پر بات چیت شروع کر دی۔

اچانک اُس نے متاثرہ شخص سے جنسی عمل کرنے کی خواہش ظاہر کی۔ جسے اُس نے مسترد کر دیا۔ اس پر ملزم نے جیب سے چاقو نکالا اور مُدعی کو ڈرا دھمکا کر اُس کے ساتھ زبردستی جنسی زیادتی کا ارتکاب کر ڈالا۔ واقعے کے بعد ملزم نے مُدعی کو واپس اُس کے گھر پر چھوڑ دیا۔ مُدعی جو کہ طالب علم ہے‘ نے اپنے قریبی دوست کی جانب سے اس گھناؤنی حرکت کی اطلاع پولیس کو دی جس نے مقدمہ درج کر کے ملزم کو گرفتار کر لیا۔

(جاری ہے)

عدالت کے سامنے ملزم نے استغاثہ کی جانب سے عائد کیے گئے جنسی زیادتی کے الزام کو ماننے سے انکار کر دیا۔ ملزم کی وکیل حمدہ مکّی نے عدالت کے فاضل جج فہد الشمسی سے درخواست کی کہ مقدمے کی تیاری کے سلسلے میں عدالت کی کارروائی کو وقتی طور پر معطل کرتے ہوئے مزید وقت دیا جائے۔ مُدعی نے استغاثہ کو بتایا ’’اس واقعے سے پہلے میری ملزم کے ساتھ گہری دوستی تھی۔

اگرچہ میرے والدین ملزم کو پسند نہیں کرتے تھے اور مجھے اس سے پرے رہنے کی نصیحت کرتے رہے۔ وقوعے کے روز میں نے اس سے ملاقات کی خواہش کا اظہار کیا۔ اس نے مجھے اپنی گاڑی پر گھر سے لیا اور ہم الرُویّہ چلے گئے۔ ہم مختلف موضوعات پر بات چیت کرتے رہے پھر ملزم نے مجھ سے جنسی فعل کی خواہش کا اظہار کیا۔ جسے میں نے ناپسندیدگی کے اظہار کے ساتھ ٹھُکرا دیا۔ تب اس نے مجھے چاقو دکھا کر جان سے مارنے کی دھمکی دے کر زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ مگر اس کے بعد مجھ سے معذرت کرنے لگا۔ میں نے گھر آنے کے بعد اس واقعے کی اطلاع پولیس کو دی۔‘‘ عدالت کی اگلی سماعت 24 جُون 2018ء کو ہو گی۔