محکمہ جنگلات کے دفاتر جلانے والے ملازمین کیخلاف مقدمہ سے دہشت گردی کی دفعات حذف کر دی گئی

ملزمان کو چھڑانے کیلئے پولیس پر دبائو

ہفتہ جون 16:11

ْآٹھ مقام(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 09 جون2018ء) محکمہ جنگلات کے دفاتر جلانے والے ملازمین کے خلاف دہشت گردی کی دفعات حذف کر دی گئی۔ ملزمان کو چھڑانے کے لئے پولیس پر دبائو۔ تفصیلات کے مطابق گذشتہ ہفتہ محکمہ جنگلات کے رقبہ پر قبضہ کی کوشش کے دوران محکمہ تعلیم کے اساتذہ اورملازمین نے محکمہ جنگلات کے دفاتر کو آگ لگا تھی آتشزدگی میں محکمہ جنگلات کے سٹورز دفاتر جلنے سے کروڑوں روپے کا نقصان ہو گیا تھا ۔

(جاری ہے)

محکمہ جنگلات کی طرف سے درج ایف آئی آر میں 09 ملزنان کو گرفتار کیا گیا تھا جو کہ محکمہ تعلیم کے ملازم ہیں۔ پولیس نے ملزمان کے خلاف انسداد دہشت گردی کے تحت ایف آئی آر درج کی تھی۔ متعدد ملزمان نے قبل از گرفتاری ضمانتیں کروا لی ہیں۔ انسداد دہشت گردی کی دفعہ6ATC کی وجہ سے گرفتار شدہ ملازمین کی ضمانتوں میں مشکلات کا سامنا تھا۔ ھکومتی دبائو اور ملی بھگت سے پولیس نی6ATC کو ختم ایف آئی آر سے حذف کر دیا ہے۔ عبوری ضمانتوں پر سانحہ کے مرکزی مجرمان کی گرفتاری کے خوف کی وجہ سے پولیس حکومت کا دبائو برداشت نہیں کر سکی ہے۔ محکمہ جنگلات نے دفعات حذف ہونے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اعلیٰ عدلیہ سے رجوع کا فیصلہ کیا ہے۔

متعلقہ عنوان :