انتخابات 2018 ،علی ترین نے پی ٹی آئی کے ٹکٹ سے دستبرداری کا اعلان کردیا

اتوار جون 00:00

لودھراں (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 جون2018ء) تحریک انصاف کے سینئر رہنما جہانگیرترین کے صاحبزاد ے علی ترین نے الیکشن ٹکٹ سیدستبرداری کااعلان کر دیا۔نجی ٹی وی کے مطابق سماجی رابطے کی ویب سائٹ پر جاری ویڈیو پیغام میں علی ترین کا کہنا تھا کہ بیرون ملک تعلیم کی وجہ سیالیکشن نہیں لڑسکوں گا، اس بار خودکو الیکشن لڑنے کا حقدار نہیں سمجھتا، ٹکٹ اسے ملنا چاہے جو حلقے اور پارٹی کو وقت دے۔

ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی سے درخواست ہے کسی اور امیدوار کو حلقے سے ٹکٹ دیں، میں اور میرے والد تحریک انصاف کے ٹکٹ ہولڈر کی بھرپور حمایت کریں گے۔علی ترین کا کہنا تھا کہ ہم نے حلقہ این اے 154 میں حکومت سے مقابلہ کیا اور 90 ہزار ووٹ حاصل کیے البتہ اس میں ہمیں فتح نہ ہوئی، ابھی میری پڑھائی جاری ہے اور ستمبر میں فائنل امتحان ہے اس لیے میں انتخابی مہم میں حصہ نہیں لے سکوں گا۔

(جاری ہے)

خیال رہے کہ گزشتہ سال 15 دسمبر کو مسلم لیگ ن کے رہنما حنیف عباسی کی درخواست پر سپریم کورٹ نے تحریک انصاف کے رہنما جہانگیر ترین کو آف شور کمپنی اور اس کے اثاثے چھپانے پر نااہل قرار دیا تھا۔نااہلی کے بعد حلقہ این اے 154 کی نشست خالی ہوگئی تھی جس پر تحریک انصاف کی جانب سے علی ترین کو ٹکٹ دیا گیا البتہ ضمنی انتخاب میں مسلم لیگ ن کے امیدوار نے ایک لاکھ 16 ہزار سے زائد ووٹ لے کر فتح اپنے نام کی تھی۔