کیڈ کی اجازت کے بغیر پمز میں شام کے اوقات میں دوبارہ نجی کلینک نے کام شروع کر دیا

اتوار جون 21:40

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 جون2018ء) پاکستان انسٹیٹیوٹ آف میڈیکل سائنسز(پمز) کی انتظامیہ نے ہسپتال میں ادارتی بنیاد پر مبنی نجی پریکٹس دوبارہ شروع کرنے کی کوششیں شروع کردی ہیں۔

(جاری ہے)

میڈیا رپورٹس کے مطابق پمز کی انتظامیہ نے ہسپتال میں شام کے وقت دوبارہ نجی کلینک شروع کرنے کی کوششیں شروع کردی ہیں،پمز کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر راجہ امجد نے بتایا ہے کہ وفاقی انتظامیہ وترقیاتی ویژن(کیڈ) کے نگران وزیر محمد عاصم خان کو بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ ہسپتال میں شام کے اوقات دوبارہ ادراتی بنیادوں پر مبنی نجی پریکٹس شروع کرنے کیلئے ان کی مدد درکار ہے اور ہم نے کیڈ کے نگران وزیر کو یہ بھی اطلاع دی ہے کہ ہسپتال کی بیشتر نشستیں خالی ہیں اور باقی عملہ اپنی پروموشنز میں تاخیر کی وجہ سے بہت مایوس ہیں،ہم نے ہسپتال میں شام کے اوقات بجی پریکٹس شروع کروائی تھی لیکن وزارت سے اجازت معطل نہ کرنے پر ہم نے اسے بند کردیا تھا لیکن اب مجھے امید ہے کہ کیڈ ہمیں دوبارہ نجی پریکٹس شروع کرنے کی اجازت دے گا اور یہ اقدامات نہ صرف شہریوں کو صحت کی سہولیات حاصل کرنے میں مدد کرے گا بلکہ اس سے ہسپتال کی آمدنی میں بھی اضافہ ہوگا اور ہمیں امید ہے کہ وزیر کیڈ مریضوں کو ریلیف فراہم کرنے کیلئے اپنا کردار باخوبی ادا کریں گی۔

متعلقہ عنوان :