اقتدار میں آنے کے بعد عوامی مفاد کے منصوبے اولیں ترجیح ہونگے ، سردار حسین بابک

اتوار جون 21:40

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 جون2018ء) عوامی نیشنل پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری سردار حسین بابک نے کہا ہے کہ اقتدار میں آنے کے بعد تعمیر و ترقی کے کاموں میں کوئی کسر اٹھا نہیں رکھی جائے گی اور اے این پی عوامی مفاد کے منصوبوں پر بھرپور توجہ دے گی ، ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے حلقہ نیابت گاؤں تھیگڑے پی کے 22بونیر میں انتکابی اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ، انہوں نے کہا کہ پی ٹی آئی کی گزشتہ حکومت نے صوبے کا خزانہ خالی کر دیا اور600ارب روپے کے خسارے کے ساتھ ساتھ300ارب روپے کا قرض عوام کے گلے کا ہار بنا دیا ،جسے اتارنے کیلئے آنے والی حکوموتوں کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا، انہوں نے کہا کہ تبدیلی سرکار کے دعوؤں کی حقیقت عوام جان گئے ہیں ، انہوں نے کہا کہ حکومت میں آنے کے بعد تمام شعبوں میں اصلاحات اور مفاد عامہ کے مطابق تمام سٹیک ہولڈرز کی مشاورت سے آگے بڑھیں گے خصوصاً تعلیمی نصاب کو حقیقی معنوں میں تاریخی، سماجی،معاشرتی، سائنسی اور جدید دور کے مطابق بنانے کیلئے پوری تیاری ، سنجیدگی اور مشاورت سے کام کا آغاز کریں گے ، سردار حسین بابک نے کہا کہ نوجوان نسل کی بہتر تربیت اور پرامن ماحول فراہم کرنے کیلئے کھیل کود کے مواقع پیدا کئے جائیں گے ، صوبے کے تجارت پیشہ افراد اور ہنر مندوں کو انتہائی آسان شرائط پر قرضے فراہم کئیء جائیں گے ،انہوں نے کہا کہ معذوروں ، بیواؤں اور مستحقین کیلئے خصوصی مراعات کا اعلان کیا جائے گا اور طلباء و طالبات کیلئے تمام تعلیمی سہولیات اور ضروریات کی فراہمی کو فوری اور ترجیحی بنیادوں پر حل کریں گے ،روخانہ پختونخوا اور ستوری دً پختونخوا کا دوبارہ اجرا کیا جائے گا ،ہائیر ایجوکیشن اور پیشہ ورانہ تعلیم کو ترجیح دی جائے گی اور ریسرچ کو فروغ دیا جائے گا، صوبے کے کسانوں کو زرعی آلات کی فراہمی اور آسان شرائط پر کھیتی باڑی کے مواقع فراہم کئے جائیں گے ،سردار حسین بابک نے کہا کہ اے این پی عوام کے مسائل کے حل اور نمائندگی کی حقیقی ترجمان ہے اور یہی وجہ ہے کہ آئے روز لوگ جوق در جوق پارٹی میں شمولیت اختیار کر رہے ہیں ، اس موقع پر ضلعی صدر محمد کریم بابک ، فاروق علی خان اور عالمگیر کان نے بھی خطاب کیا ۔

متعلقہ عنوان :