مقتول وکیل ضامن خان کی قاتل خاتون کی گرفتاری

ملزم قانون کی گرفت سے بچ نہیں سکتے قانون سب کیلئے برابر ہے،ڈپٹی کمشنر قائم لاشاری

اتوار جون 22:20

پشین(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 10 جون2018ء) ڈپٹی کمشنر قائم لاشاری نے مقتول وکیل ضامن خان کی قاتل خاتون کی گرفتاری سے متعلق بتاتے ہوئے کہا کہ ملزم قانون کی گرفت سے بچ نہیں سکتے قانون سب کیلئے برابر ہے انہوں نے کہا کہ گزشتہ دنوں پشین کے قریب غڑکئی کراس کے مقام پر وکیل ضامن خان کو قتل کرنیوالی خاتون ملزم کو لیویز فورس نے گرفتار کرلیا ہے خاتون نے دوران تفتیش اعتراف جرم بھی کرلیا ہے انہوں نے کہا کہ مقتول وکیل سے متعلق سوشل میڈیا پر من گھڑت خبروں اور قتل کو پی ٹی ایم کا حصہ قرار دینا بے بنیاد ہے جس دن مقتول وکیل کو اغواء کیا گیا اس دن سے لیویز فورس نے تفتیش کا دائرہ وسیع کرتے ہوئے مختلف زاویوں سے ملزمان کا کھوج لگایا مقتول کوئٹہ میں وکالت کا مطالعہ کرنے کے غرض سے کوئٹہ کے نجی ہوٹل میں رہائش پذیر تھا سی سی ٹی وی فوٹیج کی مدد سے پتہ چلا کہ مقتول وکیل سے آخری دن ہوٹل میں ایک مرداو و خاتون ملیں اور انہیں گاڑی میں لیکر اپنے ساتھ لے گئے سی سی ٹی وی فوٹیج کے بعد چھاپہ مار ٹیم تشکیل دی گئی جنہوں نے بروقت کارروائی کرتے ہوئے خاتون ملزمہ کو گرفتار کرلیا گرفتار خاتون ملزمہ مقتول ایڈووکیٹ ضامن خان کی اہلیہ کی خالہ ہے ڈ پٹی کمشنر نے کہا کہ مقتول کے قتل میں ملوث دیگر ملزمان کو بھی جلد گرفتار کرلیا جائے گا دریں اثناء گرفتار خاتون نے اعتراف جرم کرتے ہوئے کہا کہ وہ مقتول ایڈوکیٹ کی رشتہ دار ہے دیور کا پسٹل لیکر انہیں چھ فائر کرکے قتل کردیا فوٹیج میں دوسرا لڑکا میرا بھانجہ ہے۔