چوہدری نثار کا آزاد حیثیت میں انتخاب لڑنے کا اعلان

پارٹی نے ٹکٹ سیاسی یتیموں کو دے دیے ہیں،عورت راج کے مخالف نوازشریف نے آج اپنی بیٹی پارٹی پر مسلط کر دی،میں نے اگر منہ کھولا تو شریف کہیں منہ دکھانے کے قابل نہیں رہیں گے مگر مجھے 34سالہ رفاقت کا خیال آجاتا ہے ، پی ٹی آئی میں شمولیت کا فیصلہ وقت آنے پر کروں گا ۔ پارٹی نے ٹکٹ سیاسی یتیموں کو دے دیے ہیں، تحریک انصاف میں 10 اور ن لیگ میں 100 سے بھی زائد خامیاں ہیں سابق وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار کا اڈیالہ روڈ پر کارنر میٹنگ سے خطاب

پیر جون 18:00

چوہدری نثار کا  آزاد حیثیت میں انتخاب لڑنے کا اعلان
راولپنڈی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 11 جون2018ء) سابق وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار علی خان نے آزاد حیثیت میں انتخاب لڑنے کا اعلان کرتے ہوئے کہا کہ پارٹی نے ٹکٹ سیاسی یتیموں کو دے دیے ہیں۔ تحریک انصاف میں 10 اور ن لیگ میں 100 سے بھی زائد خامیاں ہیں،عورت راج کے مخالف نوازشریف نے آج اپنی بیٹی پارٹی پر مسلط کر دی ہے،میں نے اگر منہ کھولا تو شریف کہیں منہ دکھانے کے قابل نہیں رہیں گے مگر مجھے 34سالہ رفاقت کا خیال آجاتا ہے ، پی ٹی آئی میں شمولیت کا فیصلہ وقت آنے پر کروں گا ۔

پیر کو اڈیالہ روڈ پر کارنر میٹنگ سے خطاب کرتے ہوئے سابق وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار نے مسلم لیگ (ن) کے ٹکٹ پر الیکشن نہ لڑنے کا فیصلہ کیا ہے ۔۔چوہدری نثار نے کہا کہ عورت راج کے مخالف نوازشریف نے آج اپنی بیٹی پارٹی پر مسلط کر دی ہے ۔

(جاری ہے)

مسلم لیگ (ن) نے ٹکٹ سیاسی یتیموں کو دیے ہیں ، اگر پی ٹی آئی میں دس خامیاں ہیں تو مسلم لیگ (ن) میں 100سے زائد خامیاں ہیں ۔

میں نے اگر منہ کھولا تو شریف کہیں منہ دکھانے کے قابل نہیں رہیں گے مگر مجھے 34سالہ رفاقت کا خیال آجاتا ہے ، میں آزاد حیثیت میں انتخابات میں حصہ لوں گا اور اس کے لئے زیادہ محنت کی ضرورت ہے ۔ پی ٹی آئی میں شمولیت کے سوال پر چوہدری نثار نے کہا کہ فیصلہ وقت آنے پر کروں گا۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی نے ٹکٹ سیاسی یتیموں کو دے دیے ہیں۔سابق وفاقی وزیر نے اپنی جماعت کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا کہ تحریک انصاف میں 10 اور ن لیگ میں 100 سے بھی زائد خامیاں ہیں۔ انہوں نے کہا وہ بہت کچھ کہہ سکتے ہیں لیکن انہیں 34 سال کی رفاقت کا خیال آجاتا ہے۔انہوں نے کہا کہ آزاد الیکشن لڑوں گا اس لیے اب زیادہ محنت کی ضرورت ہے۔