جیکب آبادکے قومی حلقے پر 15اور تین صوبائی حلقوں پر 52امیدوار وں نے کاغذات نامزدگی جمع کرا دئیے

پی ٹی آئی کے محمد میاں سومرو ،پی پی کے میر اعجازحسین جکھرانی ،متحدہ مجلس عمل کے ڈاکٹر اے جی انصاری ،پی ایس پی کے ظہیر جکھرانی اور دیگر نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے کاغذات نامزدگی جمع کرا نے والوں میںایک معذور اوردوخواتین امیدوار بھی امیدواروں میں شامل ہیں

منگل جون 21:22

جیکب آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 جون2018ء) جیکب آبادکے قومی حلقے پر 15اور تین صوبائی حلقوں پر 52امیدوار وں نے کاغذات نامزدگی جمع کرا دئیے ایک معذور اوردوخواتین امیدوار بھی امیدواروں میں شامل ہیں تفصیلات کے مطابق جیکب آبادکے قومی حلقے این اے 196پر پی ٹی آئی کے محمد میاں سومرو ،پی پی کے میر اعجازحسین جکھرانی ،،متحدہ مجلس عمل کے ڈاکٹر اے جی انصاری ،،پی ایس پی کے ظہیر جکھرانی ،میرعلی گوہر شہلیانی ،شریف خان بلیدی ،میر راجہ خان جکھرانی ،فہد خان جکھرانی ،ممتازجکھرانی ،خالد نوازجکھرانی ،عبدالواحد ،نواب علی بھٹی ،شفیق کھوسو سمیت 15امیدوار وں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے ہیں جبکہ جیکب آبادکے صوبائی حلقہ پی ایس ون پر پی پی کے میر زیب خان پہنور ،لیاقت علی لاشاری،سلیمان خان پہنور ،نادر خان کھوسو ،شفیق احمد کھوسو ،،تحریک انصاف کے اسلم ابڑو، اکرم ابڑو ،عمران ابڑو،میر راجہ خان جکھرانی ،محمدعمر سومرو ، متحدہ مجلس عمل کے دیدار علی لاشاری ،معذور کوڑا کٹوہر ،عباس علی شاہ بخاری ،غضنفر علی سومرو ،عبدالجبار سمیت 17امیدواروں جبکہ پی ایس ٹو ٹھل پر پی پی کے ڈاکٹر سہراب سرکی ،امداد علی سرکی ،محمد محسن سرکی ،شفیق احمد کھوسو،سردارذوالفقارسرکی ،پی ٹی آئی کے طاہر خان کھوسو،،متحدہ مجلس عمل کے سید شاہ محمدشاہ ،فیروزاں لاشاری ،صغریٰ لاشاری،نصراللہ برڑو، الٰہی بخش بھٹی ،محمد شریف ،فہد حسن کھوسو سمیت 20امیدواروں اورپی ایس تھری گڑھی خیروپر پی پی کے ممتازجکھرانی ،غلام محمد شہلیانی ،میر اعجازحسین جکھرانی ،شفقت حسین جکھرانی ،نورالرحمن جکھرانی ،ضیاء الرحمن جکھرانی ،سید شبیر شاہ ،گوہر علی شاہ ،،تحریک انصاف کے سخی عبدالرزاق کھوسو ،شریف خان بلیدی ،سجادعلی بلوچ ،محمد نوربروہی ،محنت کش عرض محمد ڈاھانی سمیت 15امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرائے ہیں جن میں ٹھل سے دوخواتین امید وار اور جیکب آباد کے صوبائی حلقے سے ایک معذور امیدوار انتخابی میدان میں اترے ہیں امیدواروں کے کاغذات نامزدگی کی جانچ پڑتال رٹرننگ افسران نے شروع کردی ہے ۔