چین میں فضائی آلودگی کے خاتمے کے لیے تین سالہ منصوبہ کا اعلان

عوام کے معیارزندگی کو بہتر بنانے ، بیرونی تجارت سمیت دیگر امور بارے نئی پالیسیوں کی تدوین

جمعرات جون 14:15

بیجنگ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 جون2018ء) چین کی مرکزی کابینہ (ریاستی کونسل) کا رسمی اجلاس بیجنگ میں منعقد ہوا۔اجلاس میں آئندہ تین برسوں میں فضائی آلودگی میں کمی لانے کے فارمولے کا اعلان کیاگیا ۔ اس کے علاوہ درآمدات میںتوسیع،عوام کے معیارزندگی کی بلندی اور بیرونی تجارت سمیت دیگر امورپربھی نئی پالیسیاںمرتب کی گئیں۔

(جاری ہے)

فضائی آلودگی کے خاتمے کے لیے مزکورہ تین سالہ منصوبے کے مطابق آلودگی کے منبع پرکنٹرول،کوئلے کے استعمال میں کمی، قدرتی گیس اور صاف توانائی کے استعمال میںاضافہ،آلودگی پر زیادہ سخت نگرانی،زیادہ جامع قانونی نظام کے قیام،متعلقہ اطلاعات کابھرپور اجرا،آلودگی کے ذمہ داران کاتعین اورسزاسمیت جامع اقدامات اخیتارکئے جائیں گے تاکہ فضائی آلودگی پر موئثر طور پر کنٹرول کیا جا سکے۔

کھلے پن اور آزاد تجارت کے فروغ کے لیے چین برآمدات اور درآمدات کوزیادہ وسعت دیگا۔درآمدات پر عائد ڈیوٹی میں مزید کمی لائی جائیگی،برآمدات ودرآمدات کے انتظامی نظام کوزیادہ موئثر اور تیز کیا جائیگا،بیرونی تجارت کے ضمن میں کریڈٹ کا نظام قائم کیا جائیگا اور عالمی حقوق کی حفاظت پر زیادہ زور دیا جائیگا۔

متعلقہ عنوان :