کوئٹہ خالی ہوگیا ،پردیسی عید منانے اپنے اپنے علاقوں میں چلے گئے

جمعرات جون 18:16

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 جون2018ء) کوئٹہ شہر خالی ہوگیا اور پردیسی اپنے اپنے علاقوں میں چلے گئے تفصیلات کے مطابق عیدا لفطر منانے کیلئے بلوچستان سے تعلق رکھنے والے زیادہ تر سرکاری ملازمین ،قبائلی عمائدین اور دیگر اہم شخصیات ہر سال کی طرح عید الفطر اپنے اپنے آبائی گائوں میں مناتے ہیں زیادہ تر بیوروکریٹ عید کراچی ،،لاہور اور اسلام آباد میں مناتے ہیں ،جمعرات کے روز کوئٹہ شہر تقریباً خالی ہوگیا اور پردیسی اپنے اپنے گائوں روانہ ہوگئے ،زیادہ تر رش بس اڈوں ،ویگن اڈوں پر دیکھا گیا جبکہ پی آئی اے نے عید کے موقع پر کم نرخوں پر ٹکٹ فروخت کرنے کی زیادہ رقوم حاصل کی جبکہ محکمہ ریلوے نے مسافروں کو ٹکٹوں میںرعایت دی اور کوئٹہ سے اندرون بلوچستان جانیوالے ٹرینوں پر بھی رش دیکھنے میں آیا ،جمعرات کے روز زیادہ تر کوئٹہ شہر میں مٹھائیوں اور بیکریوں ،بڑی بڑی مارکیٹوں میں خرید وفروخت جاری رہی ،شدید گر می کے باوجود لوگوں نے صبح سے ہی عید کی خریداری جاری رکھی ،سرکاری ملازمین نے اپنے عہدے کا صحیح فائدہ اٹھاتے ہوئے سرکاری گاڑیوں او رپیٹرول لیکر اپنے اپنے آبائی گائوں روانہ ہوگئے ہیں ،سرکاری ملازمین کو 4دن کی چھٹیاں دی گئی ہیں یعنی 15سے 18جون تک چھٹیاں دی گئیں ہیں ،،کوئٹہ شہر میں سیکیورٹی ہائی الرٹ کردی گئیں ہیں ،اور خاص طورپر کوئٹہ شہر میں بڑے بڑے خریداری کے مراکز جو بڑے بڑے پلازوں میں قائم ہے وہاں پر خفیہ کیمروں کے ذریعے نگرانی کی جارہی ہے ،جبکہ بلوچستان کیساتھ لگنے والی دو سرحدیں ایران اور افغانستان پر بھی کھڑی نگرانی کی جارہی ہے اور کوئٹہ شہر میں داخل ہونیوالے افراد کی بھی نگرانی کی گئی ،کالے شیشے والوں گاڑیوں کی چیکنگ کا سلسلہ جو چند روز سے جاری ہے وہ جمعرات کے روز بھی جاری رہا ۔