بلاول بھٹو زرداری، نثار کھوڑو اور سہیل سیال کے نامزدگی فارم منظور

فریال تالپور کے نامزدگی فارم پر اعتراضات ریٹرننگ افسر نے 18 جون کو پیشی رکھ دی

جمعرات جون 18:57

بلاول بھٹو زرداری، نثار کھوڑو اور سہیل سیال کے نامزدگی فارم منظور
لاڑکانہ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 14 جون2018ء) بلاول بھٹو زرداری،،، نثار کھوڑو اور سہیل سیال کے نامزدگی فارم منظور، فریال تالپور کے نامزدگی فارم پر اعتراضات ریٹرننگ افسر نے 18 جون کو پیشی رکھ دی۔ تفصیلات کے مطابق لاڑکانہ ضلع کے حلقوں این اے 200، پی ایس 11، پی ایس 12 پر اسکروٹنی کا عمل جمعرات کے روز رٹرننگ افسران کے دفتر میں ہوا۔ چیئرمین پیپلز پارٹی بلاول بھٹو زرداری جو کہ حلقہ این اے 200 سے امیدوار ہیں کی اسکروٹنی ففتھ ایڈیشنل سیشن جج و رٹرنننگ افسر شام لال کے دفتر میں ہوئی اس موقع پر ان کے وکیل فاروق ایچ نائیک پیش ہوئے۔

عدالت نے فاروق ایچ نائیک سے کچھ سوالات پوچھنے کے بعد بلاول بھٹو زرداری کے نامزدگی فارم کو منظور کردیا۔ پیپلز پارٹی کے صوبائی صدر نثار احمد کھوڑو کی جانب سے پی ایس 11 پر داخل کیے گئے نامزدگی فارم پر اسکروٹنی کے موقع پر تھرڈ سول جج اینڈ جڈیشل مجسٹریٹ ظفر اللہ جکھرانی کی عدالت میں پیش ہوئے جہاں لاڑکانہ عوامی اتحاد کے امیدوار معظم علی عباسی کی جانب سے اعتراض اٹھائے گئے کہ نثار کھوڑو نے اثاثے چھپانے کے ساتھ ساتھ ٹیکسوں کی بھی ادائیگی نہیں کی۔

(جاری ہے)

عدالت نے دونوں فریقین کی جرح کے بعد نثار کھوڑو کا نامزدگی فارم منظور کرلیا۔ دوسری جانب سابق صوبائی وزیر داخلہ سہیل انور سیال پی ایس 12 کے رٹرننگ افسر سیکنڈ سینیئر سول جج راجہ حبیب الرحمٰن جونیجو کے دفتر میں پیش ہوئے۔ اسکروٹنی کے موقع پر لاڑکانہ عوامی اتحاد کے رہنماؤں کی جانب سے اعتراض اٹھائے کہ انہوں نے اثاثے چھپائے ٹیکس ادا نہیں کیا اور اقامہ بھی رکھتے ہیں تاہم رٹرننگ افسر نے اعتراضات مسترد کرتے ہوئے سابق صوبائی وزیر داخلہ سہیل انور سیال اور ان کے بھائی طارق انور سیال کے کاغذات نامزدگی منظور کرلیے۔

پی ایس 10 پر آزاد امیدوار قادربخش بھٹی کی جانب سے فریال تالپور کے نامزدگی فارم پر اعتراضات داخل کروائے گئے جس میں کہا گیا کہ فریال تالپور دبئی کی اقامہ ہولڈر اور وہیں تین فلیٹس کی مالک بھی ہیں جس پر رٹرننگ افسر نے 18 جون کو طلب کرلیا ہے۔ عدالت کے باہر پیپلز پارٹی کے سینیئر رہنما اور بلاول بھٹو زرداری کے نمائندے فاروق ایچ نائیک نے کہا کہ بلاول بھٹو زرداری کا فارم منظور ہونا پیپلز پارٹی کی جیت کی شروعات ہے، این اے 200 ہمیشہ بھٹو خاندان کی سیٹ رہی اور اب یہاں سے بلاول بھٹو زرداری رکن اسمبلی منتخب ہوں گے۔

انہوں نے کہا کہ فریال تالپور کے پی ایس 10 پر داخل نامزدگی فارم میں ابھی تک ایف بی آر، نیب اور اسٹیٹ بینک کی جانب سے کاغذات عدالت کو نہیں بھجوائے گئے جس کی وجہ سے کاغذات نامزدگی کی منظوری میں دیر ہوئی ہے۔ امید ہے کہ کاغذات نامزدگی منظور ہونگے۔