عمران خان کے پاس کرپٹ لوگ ہیں اور ان کی پارٹی کرپشن کے پیسوں سے چل رہی ہے جوشخص عمرے پر بھی چارٹرطیارے میں امیروں کے ساتھ گیا وہ اس ملک میں کیا تبدیلی لائے گا،

فیصلہ قوم کو کرنا ہے کہ وہ جمہوریت کے ساتھ ہے یا عمران خان کے ساتھ ،جس نے اپنی پارٹی کی اسی فیصد ٹکٹیں بھی جاگیرداروں ، وڈیروں امیروں اور لوٹوں کو دی ہیں قومی اسمبلی کے سابق اپوزیشن لیڈرسیدخورشید احمد شاہ کا ہندو برادری کے جلسے سے خطاب

جمعہ جون 18:38

عمران خان کے پاس کرپٹ لوگ ہیں اور ان کی پارٹی کرپشن کے پیسوں سے چل رہی ..
سکھر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 15 جون2018ء) قومی اسمبلی کے سابق اپوزیشن لیڈرسیدخورشید احمد شاہ نے کہا ہے کہ عمران خان کے پاس کرپٹ لوگ ہیں اور ان کی پارٹی کرپشن کے پیسوں سے چل رہی ہے جوشخص عمرے پر بھی چارٹرطیارے میں امیروں کے ساتھ گیا وہ اس ملک میں کیا تبدیلی لائے گا، فیصلہ قوم کو کرنا ہے کہ وہ جمہوریت کے ساتھ ہے یا عمران خان کے ساتھ ،جس نے اپنی پارٹی کی اسی فیصد ٹکٹیں بھی جاگیرداروں ، وڈیروں امیروں اور لوٹوں کو دی ہیں۔

(جاری ہے)

جمعہ کو روہڑی کے قریب علاقے کندھرا میں ہندو برادری کے ایک جلسے سے خطاب کرتے ہوئے سید خورشید شاہ نے کہا کہ اللہ کرے کہ یہ الیکشن صاف اور شفاف ہوں کیونکہ یہ انتخابات ملک کی تاریخ کے اہم ترین انتخابات ہیں اگر یہ الیکشن صاف اور شفاف نہ ہوئے اور ایسے ویسے لوگ آگئے تو پھر ملک کا اللہ ہی حافظ ہوگا الیکشن کمیشن نے اس حوالے سے فوج پر بہت بڑی ذمہ داری ڈال دی ہے اب فوج کی سالمیت کا سوال ہے کیونکہ ملک اس وقت مشکل حالات سے گذر رہا ہے ان حالات میں ملک کو ایسی قیا دت کی ضرورت ہے جو اسے مشکلات سے نکال سکے اسے قرضوں کی دلدل سے نکال سکیکیونکہ اس وقت ملک میں تیل بجلی مہنگی ہے غریب مررہا ہیاس لیے عوام جس کے پیچھے ہوں اسے مینڈیٹ ملنا چاہیئے ان کا کہنا تھا کہ پانچ سال ڈٹ کر اپوزیشن کی طعنے بھی ملے کہ لڑتا نہیں ہے بھڑتا نہیں ہے مگر میرے پاس دلائل تھے جن پرہمیشہ بات کی ان کا کہنا تھا کہ ہم لوگوں کو پٹواری یا چوکیدار نہیں ڈاکٹر اور انجنئیر بنانا چاہتے ہیں جبکہ سکھرکو انڈسٹری حب بنائیں تاکہ لوگوں کو روزگار مل سکے ہر کوئی خورشید شاہ نہیں ہے کہ وہ اسپتال یا اسکول بنائے قبل ازیں علاقے کی ہندوبرادری کے مکھی نامو مل نے مسلم لیگ فنکشنل چھوڑ کر پیپلزپارٹی میں اپنی شمولیت کا اعلان کیا۔