عمران خان کا چیئرمین نادرا عثمان مبین کو ہٹانے کا مطالبہ

عمران خان نے پارٹی رہنماؤں کو بھی چیئرمین نادرا کے خلاف آواز اٹھانے کی ہدایت کر دی عثمان مبین کی موجودگی میں صاف اور شفاف الیکشن نہیں ہو سکتے اس لیے انہیں فوری طور پر عہدے سے ہٹایا جائے ،ْالیکشن کمیشن میں درخواست دائر کرینگے ترجمان نے نادرا پر دھاندلی کے الزامات کو بیبنیاد اور من گھڑت قرار دے دیا

پیر جون 12:40

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 18 جون2018ء) پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے چیئرمین نادرا عثمان مبین کو عہدے سے ہٹانے کا مطالبہ کیا ہے۔ذرائع کے مطابق پی ٹی آئی سربراہ نے چیئرمین نادرا عثمان مبین کے خلاف الیکشن کمیشن جانے کا فیصلہ کیا ۔ذرائع کے مطابق عمران خان نے عثمان مبین کو عہدے سے ہٹانے کیلئے پٹیشن بھی تیار کر لی ہے اور انہوں نے پارٹی رہنماؤں کو بھی چیئرمین نادرا کے خلاف آواز اٹھانے کی ہدایت کر دی ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ عمران خان کی جانب سے چیئرمین نادرا کے خلاف الیکشن کمیشن میں دائر کرنے کے لیے تیار کی گئی پٹیشن میں مؤقف اختیار کیا گیا ہے کہ عثمان مبین کو ن لیگ نے تعینات کیا تھا اور انہوں نے ن لیگ کو الیکشن جیتنے میں مددکے لیے ڈیٹا فراہم کیا تھا۔

(جاری ہے)

ذرائع کے مطابق چیئرمین تحریک انصاف عمران خان کا مؤقف ہے کہ عثمان مبین کی موجودگی میں صاف اور شفاف الیکشن نہیں ہو سکتے اس لیے انہیں فوری طور پر عہدے سے ہٹایا جائے۔

تحریک انصاف کے رہنما بابر اعوان نے بھی چیئرمین نادرا عثمان مبین کے خلاف پٹیشن تیار کرنے کی تصدیق کر دی ہے۔۔بابر اعوان نے کہا کہ پی ٹی آئی جلد الیکشن کمیشن میں چیئرمین نادرا کے خلاف پٹیشن دائر کرے گی۔دوسری جانب نیشنل ڈیٹا بیس اینڈ رجسٹریشن اتھارٹی کے ترجمان نے نادرا پر دھاندلی کے الزامات کو بیبنیاد اور من گھڑت قرار دے دیا ہے۔ترجمان نادرا کی جانب سے جاری بیان کے مطابق ادارے کا عام انتخابات کے انعقاد میں محدود کردار ہے، نادرا الیکشن کمیشن کی آئین کے تحت تکنیکی مدد کر رہا ہے۔۔عمران خان کی جانب سے مسلم لیگ ن کو ڈیٹا فراہم کرنے کے الزام پر نادرا حکام کا کہنا ہے کہ نادرا نیکسی قسم کا ڈیٹا کسی بھی سیایسی جماعت کو نہیں دیا گیا۔