عید الفطر کی چھٹیوں میں خیبرپختونخوا کے مختلف علاقوں میں 25 افراد جاں بحق

Mian Nadeem میاں محمد ندیم منگل جون 12:41

عید الفطر کی چھٹیوں میں خیبرپختونخوا کے مختلف علاقوں میں 25 افراد جاں ..
 پشاور(اردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین-انٹرنیشنل پریس ایجنسی۔19 جون۔2018ء) عید الفطر کی چھٹیوں کے دوران خیبرپختونخوا کے مختلف شہروں اور علاقوں میں تقریباً 25 افراد جاں بحق اور متعدد زخمی ہوئے۔لکی مروت میں روڈ کے حادثے اور آتشزدگی کے واقعات میں مجموعی طورپر خاتون سمیت 7 افراد جاں بحق ہو ئے۔پولیس کے مطابق نورگن ٹاﺅن میں رکشہ بے قابو ہو کر نہر میں جا گر جس میں سوار خاتون اور بچہ جاں بحق جبکہ 3 افراد زخمی ہو گئے۔

لکی مروت میں مانجھی والا چوک کے پاس موٹرسائیکل درخت سے جا ٹکرائی جس کے نتیجے میں موٹرسائیکل سوار 2 افراد زندگی کی بازی ہار گئے۔ملنگ اڈہ تاجوری روڈ پر بچکن احمدزئی کے مقام پر پک اپ ٹرک الٹ گیا جس میں سیر وتفریح کے لیے جانے والے افراد متعدد افراد زخمی جبکہ ایک شخص جاں بحق ہو گیا۔

(جاری ہے)

تھری ویلرز سے ایک بچہ گر کے موقعے پر ہی چل بسا۔لکی مروت کے تاجازئی کے علاقے میں فضل کریم نامی شخص کو پرانی دشمنی کی نذر ہو گیا۔

چترال کے واشیش گاوں میں ایک چیپ دریا میں جاگری جس کے نتیجے میں اس میں سوار 5 میں سے 2 افراد جاں بحق اور 3 زخمی ہو گئے۔جاں بحق ہونے والوں کی شناخت سعید الرحمٰن اور وجی الرحمٰن سے ہوئی۔ مانسہرہ میں کوٹکے کے علاقے میں موٹرسائیکل سوار محمد اوسامہ اور مراد علی ویگن کی ٹکر سے لقمہ اجل بن گئے۔نوشیرہ میں خاتون سمیت 4 لوگ جاں بحق ہوئے جبکہ روڈ کے حادثے میں تقریباً 71 افراد زخمی ہوئے، زخمی ہونے والوں کی زیادہ تعداد موٹرسائیکل سواروں کی ہے۔

ناظم پور نامی علاقے میں خاتون نے خودکشی کرلی۔ایک واقعے میں مقامی رہنما جے آئی حضرت کو ذاتی دشمنی کی بنیاد پر مبنیہ طور پر جاوید، شاہ فیصل اور ممریز نے قتل کردیا۔صوابی کا رہائشی جاوید اقبال کندپارک کے پاس دریا میں نہتے ہوئے ڈوب گیا جس کی لاش ریسکیو 1122 نے نکالی۔خیرآباد کے رہائشی مراد خان خٹک کو مبینہ طور پر حیدر اور طارق نے پرانی دشمنی پر قتل کردیا۔

بنوں روڈ کے حادثے اور پرتشدد واقعات میں خاتون سمیت 5 افراد جاں بحق اور 11 زخمی ہو گئے۔میران پولیس اسٹیشن کی حدود میں شوہر نے بیوی کو ناجائز تعلقات استوار رکھنے کے شک پر قتل کردیا۔دو مختلف واقعات میں ایک خاتون نے زہری چیز کھا کر خود کشی کرلی جبکہ ڈومیل علاقے میں ایک خانون کو اس کے گھر میں قتل کردیا گیا۔ڈومیل میں ہی کار اور رکشے کے تصادم میں 11 افراد زخمی ہو گئے۔

کرک میں مختلف حادثات اور واقعات میں 5 افراد جاں بحق اور 4 زخمی ہو گئے۔ڈیم میں نہاتے ہوئے نوعمر لڑکا ڈوب گیا، موٹرسائیکل کے حادثے میں شمشیر غنی اور رضا خان انتقال کر گئے۔ مناخیل کے علاقے میں ٹریکٹر موٹرسائیکل پر چڑھ دوڑا جس کے نتیجے میں کامران اور حسین جاں بحق ہو گئے اور انڈس ہائی وے پر کار حادثے میں 4 افراد زخمی ہوگئے جبکہ شنگلا میں روڈ حادثے میں 11 افراد زخمی ہوگئے۔