یمن، جنگ بندی کے لئے کئے گئے مذاکرات نتیجہ خیز ثابت نہ ہو سکے، مارٹن گرفتھس

ایران نواز حوثی باغیوں نے اقوام متحدہ کی تمام پیش کش ٹھکرا دیں

منگل جون 13:07

صنعائ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 جون2018ء) اقوام متحدہ کے نمائندہ خصوصی برائے یمن مارٹن گرفتھس اور حوثیوں مابین مذاکرات نتیجہ خیز ثابت نہ ہو سکے، ایران نواز حوثی باغیوں نے اقوام متحدہ کی تمام پیش کش ٹھکرا دیں۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق حوثیوں نے الحدیدہ کی بندر گاہ سے انخلا کرنے اور اس مقام کو اقوام متحدہ کی زیرِ نگرانی دینے کے مطالبے کو ٹھکرا دیا۔

(جاری ہے)

اقوام ِ متحدہ کے نمائندہ خصوصی برائے یمن مارٹن گرفتھس یمن کے حوثیوں کے ساتھ ہونے والے مذاکرات میں کسی نتیجے تک نہیں پہنچ سکے۔گرفتھس کا کہنا ہے کہ الحدیدہ شہر میں حوثیوں کے خلاف آپریشن کے حوالے سے ہونے والے مذاکرات سے کوئی ٹھوس نتیجہ حاصل نہیں کیا جا سکا ۔حوثیوں نے الحدیدہ کی بندر گاہ سے انخلا کرنے اور اس مقام کو اقوام متحدہ کی زیرِ نگرانی دینے کے مطالبے کو ٹھکرا دیا ہے۔توقع ہے کہ گرفتھس آج صنا سے روانہ ہوجائینگے۔خیال رہے کہ گرفتھس اتحادی قوتوں کے الحدیدہ آپریشنز کو روکنے کے زیر مقصد پیشگی شرائط کو پیش کرنے اور حوثی حکام سے ملاقات کی غرض سے بروز ہفتہ صنا تشریف لے گئے تھے۔