مقبوضہ کشمیر میںبھارتیہ جنتا پارٹی اور پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی کا اتحاد ٹوٹنے کے ساتھ ہی کٹھ پتلی حکومت کا بھی خاتمہ

منگل جون 15:10

سرینگر (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 جون2018ء) مقبوضہ کشمیر میں ہندو فرقہ پرست تنظیم بھارتیہ جنتا پارٹی نے پیپلز ڈیموکریٹک پارٹی کے ساتھ اتحاد ختم کردیا ہے جس سے علاقے میں چار سال پر محیط مخلوط حکومت کا بھی خاتمہ ہوگیاہے۔

(جاری ہے)

کشمیر میڈیا سروس کے مطابق اتحاد توڑنے کا فیصلہ نئی دہلی میں بی جے پی کے صدر امت شاہ کی صدارت میں منعقدہ ایک اجلاس میں کیاگیا۔ بی جے پی کے وزراء نے کٹھ پتلی وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کو اور ارکان اسمبلی نے گورنر کو اپنا اپنا استعفیٰ پیش کردیاہے۔اس سے پہلے امت شاہ نے مقبوضہ علاقے کی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کے لیے اپنی جماعت کے کابینہ ارکان،پارٹی عہدیداران اور امور کشمیر کے انچارج سے ملاقات کی تھی ۔