شاردہ میں آتشزدگی کے نقصانات کے معاوضہ جات کو جلد ادا کیا جائیگا ‘تاجروں کو پختہ دکانوں کی تعمیر کیلئے میٹریل فراہم کیا جائے گا‘ شاردہ سیاحتی مقام ہے سیاحت کے فروغ کے لئے اقدامات کئے جا رہے ہیں‘ اخوت این جی او نیلم میں بلاسود قرضے دے رہی ہے ‘ لوگ ان قرضہ جات کو کاروبار کے لئے استعمال کریں

وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان کا بالائی نیلم کے تحصیل ہیڈکواٹر شاردہ میں عوامی اجتماع سے خطاب

منگل جون 16:07

آٹھ مقام(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 جون2018ء) وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان نے بالائی نیلم کے تحصیل ہیڈکواٹر شاردہ میں عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے شاردہ میں آتشزدگی کے نقصانات کے معاوضہ جات کو جلد ادا کیا جائے گا تاجروں کو پختہ دکانوں کی تعمیر کے لئے میٹریل فراہم کیا جائے گا۔ شاردہ سیاحتی مقام ہے سیاحت کے فروغ کے لئے اقدامات کئے جا رہے ہیں۔

اخوت این جی او نیلم میں بلاسود قرضے دے رہی ہے ۔ لوگ ان قرضہ جات کو کاروبار کے لئے استعمال کریں۔ شاردہ میں ڈپٹی سپرنٹنڈنٹ پولیس کے انفراسٹکچر کو بحال کیا جا رہا ہے ۔ نیلم کو دو حلقوں میں تقسیم کرنے کا اصولی فیصلہ کر لیا گیا ہے جلد اس پر بھی عملدرآمد ہو جائے گا۔ وادی نیلم میں1122 کا قیام اور تمام تجارتی مراکز میں فائربرگیڈ کی گاڑیاں مہیا کی جائیں گی ۔

(جاری ہے)

سر سبز جنگلات کے کٹائو پر مکمل پابندی عائد کی گئی ہے عوام کو متبادل کے طور پر گیس اور بجلی پرسبسڈی دی جائے گی۔ سپیکر غلام قادر کی واپس آنے پر آٹھمقام تائوبٹ توسیعی منصوبے کا سنگ بنیاد رکھ دیا جائے گا۔ وزیر اعظم نے عوامی شکایات پر نوٹس لیتے ہوئے بجلی کے بوگس بلات اور محکمہ جنگلات کے جعلی کیسز کو فوری ختم کر نے کی ہدایت جاری کی ہے ۔ وزیر اعظم فاروق حیدر کا کہناتھا کہ آئینی ترامیم سے کشمیر کونسل کے اختیارات حکومت آزادکشمیر کو منتقل ہونے سے ریاست کے عوام کے حوصلے بلند ہوئے ہیں مالیاتی اختیار کی بدولت ریاست کی تعمیرترقی کا عمل مزید تیز ہو جائے گا۔