غذر میں سیاحوں کی آمد کا سلسلہ جاری ،بالائی علاقوں میں بڑی تعدادمیں سیاحوں نے ڈیرے ڈال دئیے

منگل جون 20:20

غذر (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 19 جون2018ء) غذر میں سیاحوں کی آمد کا سلسلہ جاری ہے اور ضلع کے بالائی علاقوں میں بڑی تعدادمیں سیاحوں نے ڈیرے ڈال دئیے ہیں اوریہاں کے صاف و شفاف پانیوں میں پائی جانے والی دنیا کی نایاب مچھلی ٹراوٹ کا شکار کرکے خوب لطف اندوز ہورہے ہیں مختلف ممالک کے سیاح غذر آمد سے ہوٹلوں میں بھی رش شروع ہوگیاموسم خوشگوار ہونے کے ساتھ ہی علاقے میں ملکی وغیر ملکی سیاحوں کی آمد جاری ہے اور غذر کے مختلف علاقوں میں سیاح خیمہ زن ہوگئے ہیں اور یہاں کے پرفضا ماحول میں خوب انجوائی کر رہے ہیں تو دوسری طرف محکمہ سیاحت کی کارکردگی صفر ہوکر رہ گئی ہے حکام عدم دلچسپی علاقے میں بنائے گئے 9ٹورسٹ ویوپوائنٹ لاوارث ہوگئے ہیںان عمارتوں کی تعمیر پر کروڑوں روپے خرچ ہوگئے تھے مگر مناسب دیکھ بال نہ ہونے کی وجہ سے اب یہ ویوپوائنٹ کی عمارتیں بھوت بنگلوں کا منظر پیش کررہی ہے اور اس وقت صورت حال یہ کہ بعض ٹورسٹ ویوپوائنٹ کی عمارتوں کے شیشے اور لکڑی بھی چوری ہونا شروع ہوگئے ہیں جبکہ گاہکوچ میں بنایا گیا ٹورسٹ ویو پوائنٹ تک پہنچنے کے لئے دریا میں بنایا گیا پل دو سال قبل دریائے غذر کی نذر ہوگیا تھا تاحال اس پل کی تعمیر مکمل نہ ہوسکا جس باعث یہ عمارت بھی لاورث ہوگئی ہے ور اب یہ عمارت اثار قدمہ کا منظرپیش کر رہی ہے محکمہ سیاحت غذر علاقے میں سیاحت کی فروغ کے حوالے سے کوئی کردار نظر نہیں ارہا ملازمین صرف تنخواہوں کی حد تک محدور ہوکر رہ گئے ہیں عوامی سیاسی سماجی حلقوں نے محکمہ سیاحت کے اعلی حکام سے اصلاح احوال کا مطالبہ کیا ہے اور کہا ہے کہ غذرمیں ایک طرف یہاں کی خستہ حال سڑکوں سے یہاں آنے والے سیاحوں کو مشکلات کا سامنا ہے تو دوسری طرف یہاں آنے والے سیاحوں کو محکمہ ٹوررزم کی عدم تعاون سے بھی مشکلات میں اضافہ ہورہا ہے غذر میں ایک طرف یہاں کی خستہ حال سٹرکوں سے یہاں آنے والے سیاح پریشان ہیں دوسری طرف محکمہ سیاحت کی طرف سے انفارمیشن نہ دینے سے بھی یہاں آنے والے سیاحوں کو سخت مشکلات کا سامنا ہے ۔

متعلقہ عنوان :