دُبئی:ویزہ سٹیٹس میں تبدیلی کی آڑ میں خاتون کو زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا

ملزم کے مطابق اُس کے متاثرہ خاتون سے دیرینہ تعلقات قائم تھے

Muhammad Irfan محمد عرفان بدھ جون 14:59

دُبئی:ویزہ سٹیٹس میں تبدیلی کی آڑ میں خاتون کو زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا
دُبئی(اُردو پوائنٹ اخبار تازہ ترین۔20جُون 2018ء) امارات میں غیر قانونی طور پر مقیم خاتون کو ویزہ سٹیٹس میں تبدیلی کا پھسلاوا دے کر اُسے زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ تفصیلات کے مطابق 29 سالہ مراکشی خاتون اپنے ایک مرد دوست کے ساتھ کلب میں موجود تھی جب اُسے ایک 23 سالہ اماراتی شہری کا فون آیا جس نے اُسے کہا کہ وہ اس کے غیر قانونی ویزہ سٹیٹس کو قانونی بنانے میں اُس کی مدد کرے گا‘ اس معاملے پر مزید بات چیت کے لیے وہ اُس کے فلیٹ پر آ جائے۔

اس پر مراکشی خاتون اپنے دوست کے ہمراہ البشرہ میں واقع ملزم کے فلیٹ کی طرف روانہ ہو گئی۔ جب وہ دونوں ملزم کی بتائی ہوئی جگہ پر پہنچے تو وہاں موجود مُلزم نے خاتون کے مرد دوست سے کہا کہ وہ اپنی گاڑی مخصوص جگہ پر پارک کر کے فلیٹ پر آ جائے۔

(جاری ہے)

اس دوران ملزم مراکشی خاتون کو اپنے فلیٹ پر لے گیا مگر اُس نے خاتون کے مرد ساتھی کو کال کر کے فلیٹ کا نمبر نہ بتایا۔

فلیٹ میں داخل ہوتے ہی اماراتی شہری نے دروازہ لاک کر کے خاتون سے اُس کا موبائل فون چھین کر آف کر دیا‘ پھر اُسے زد و کوب کر کے زبردستی اپنے بیڈ روم میں لے گیا جہاں اُسے زبردستی شراب پینے پر مجبور کیا اور پھر برہنہ کرنے کے بعد زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔ اماراتی نے مبینہ طور پر خاتون کو اپنے فلیٹ میں دو گھنٹے تک محبوس کیے رکھا پھر وہ خاتون کو اُس کے گھر چھوڑنے کے لیے اپنی کار میں لے جا رہا تھا جس دوران اُس نے چلتی کار کا دروازہ کھول کر باہر چھلانگ لگا دی اور فوراً تھانے جا کر پولیس کو معاملے سے آگاہ کر دیا۔

پولیس نے اس واقعے کے نو دِن بعد ملزم کو گرفتار کر لیا۔ بعد ازاں ملزم نے اپنی ضمانت کرا لی۔ مقدمے کی سماعت کے دوران ملزم اپنی صفائی دینے کے لیے پیش نہ ہوا۔ اس دوران عدالت میں گواہ کے طور پر پیش ہوئے ایک پولیس لیفٹیننٹ کے مطابق ملزم کا دعویٰ تھا کہ اُس کے مُدعیہ خاتون کے ساتھ گزشتہ اٹھارہ ماہ سے باہمی رضا مندی سے جنسی تعلقات قائم تھے اور وہ جنسی عمل کے دوران اکثر شراب سے بھی لطف اندوز ہوتے تھے۔ 26 جُون 2018ء کو ملزم کی غیر حاضری کے دوران ہی اس مقدمے کا فیصلہ سُنایا جائے گا۔