آزادکشمیر کے غریب عوام کو ماہ رمضان میں آٹے پر 100روپے کی سبسڈی یکم جولائی سے ختم کر دی جائے گی

حکومت کے اس اقدام سے غریب آدمی مقامی ملوں کا معیاری آٹا کھانے سے محروم ہو جائیں گے

بدھ جون 15:50

مظفرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 جون2018ء) آزادکشمیر کے غریب عوام کو ماہ رمضان المبارک میں حکومت کی طرف سے آٹے پر 100روپے کی سبسڈی یکم جولائی سے ختم کر دی جائے گی حکومت کے اس اقدام سے غریب آدمی مقامی ملوں کا معیاری آٹا کھانے سے محروم ہو جائیں گے اور راولپنڈی کا غیر معیاری ،مضر صحت سفید آٹے پر سبسڈی ختم نہ کرے بلکہ اس کو برقرار رکھا جائے عوام کا مطالبہ ،رپورٹ کے مطابق وزیر اعظم آزادکشمیر راجہ فاروق حیدر نے عوامی مطالبے پر ماہ مقدس میں محکمہ خوراک کے آٹے پر 100روپے کی سبسڈی دی گئی جس کی وجہ سے غریب عوام کو مقامی ملوں کا معیاری آٹا میسر آرہا تھا اور عوام راولپنڈی کے مضر صحت آٹا کھانے سے بچ گئے تھے اور بیماریوں سے بھی محفوظ ہوگئے تھے مگر حکومت نے اب یہ سبسڈی یکم جولائی سے ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس پر عوام نے شدید ردعمل کا اظہار کیا ہے اور اس سبسڈی میں وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر خان سے توسیع کرنے کا مطالبہ کیا ہے تاکہ غریب آدمی مقامی ملوں کا معیاری آٹا خرید کر پیٹ کا دوزخ بھر سکے اگر سبسڈی نہ دی گئی تو اس سہولت سے محروم ہو جائیں گے۔

متعلقہ عنوان :