(ق) لیگ کے بننے سے سینئر لیڈر شپ کی جو کھیپ نکلی اس صدمے سے (ن) برسوں بلکہ آج تک نہیں نکل سکی ‘ سعد رفیق

چوہدری نثار کی سیاست سے پارٹی اوراسکی سیاست کو بھی فائدہ ہوتا ہے ،امید ہے چوہدری نثار کا راستہ دوبارہ جڑ جائیگا‘ گفتگو

بدھ جون 17:50

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 20 جون2018ء) مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما خواجہ سعد رفیق نے کہا ہے کہ (ق) لیگ کے بننے سے سینئر لیڈر شپ کی جو کھیپ نکلی اس صدمے سے مسلم لیگ (ن) برسوں بلکہ آج تک نہیں نکل سکی ،،چوہدری نثار کہنہ مشق ،سمجھدار اورانتہائی زیرک سیاستدان ہیں اور انکی موجودگی سے نہ صرف پارٹی بلکہ اس کی سیاست کو بھی فائدہ ہوتا ہے ،امید کرتا ہوں چوہدری نثار کا راستہ دوبارہ جڑ جائے گا ۔

نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے سعد رفیق نے کہا کہ میں نے مخالفین کے لئے کہا تھاکہ وہ سن لیں ہم لوہے کے چنے ہیں لیکن اگر کوئی اسے پرسنل لے لے یا اگر کوئی ادارہ یہ سمجھ بیٹھے کہ میں نے اسے چیلنج کیا ہے تو یہ مناسب بات نہیں ہے ۔ لوہے کے چنے کوئی پہلے اور کوئی بعد میں کھاتا ہے ، آج ہمیں رگڑا لگایا جارہا ہے ،ہر عمل کا رد عمل ہوتا ہے ۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہا کہ نیب کے کالے قوانین کو تبدیل نہ کرنا پیپلز پارٹی اور (ن) لیگ کی نالائقی ہے ، جب میں کہتا ہوں کہ کوئی ڈوریاں ہلاتا ہے تو فوری جواب آ جاتا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ جب مسلم لیگ (ق) بنی تو سینئر لیڈر شپ کی کھیپ نکل گئی ، مسلم لیگ (ن) برسوں بلکہ آج تک اس صدمے سے باہر نہیں نکل سکی ۔میں نام لیتا ہوں کہ چوہدری شجاعت حسین انتہائی سمجھدار آدمی تھے اور نواز شریف کو ان کی نصیحت میں سمجھداری ہوتی تھی ۔انہوں نے مزید کہا کہ چوہدری ثنار علی کہنہ مشق، سمجھدار اور انتہائی زیرک سیاستدان ہیں ، ان کی موجودگی سے نہ صرف مسلم لیگ (ن) بلکہ اس کی سیاست کو بھی فائدہ ہوتا ہے ۔ میں امید کرتا ہوں کہ راستہ دوبارہ جڑ جائے گا لیکن بعض لوگ میرے اس بات کو پسند نہیں کرتے۔انہوںنے کہا کہ لاڈلے کیلئے میرے حلقے کو مختلف حصوں میں تقسیم کیا گیا لیکن ہماری قیادت کا واضح فیصلہ ہے کہ ایسے میں مورچہ نہیں چھوڑنا چاہیے اور ڈٹ کر مقابلہ کرنا چاہیے ۔