گوجرخان، گھریلو جھگڑوں سے دلبرداشتہ خاتون نے دو کمسن بچوں سمیت کنوئیں میں چھلانگ کر خود کشی کر لی

جمعرات جون 13:02

گوجرخان(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 21 جون2018ء) گوجرخان کے شرقی قصبہ بیول کے گائوں سوئیں حافظ کی ڈھوک مستریاںمیں مستری محمد اشفاق کے گھر میں میاں بیوی کے آئے روزکے جھگڑوںاور حالات سے دلبرداشتہ خاتون نے اپنے کمرے کو آگ لگانے اوراپنی دوسالہ بیٹی اریبہ ،چار سالہ بیٹے ارمان کوقریبی کنوئیں میں پھینکنے کے بعد خود بھی کنوئیں میں چھلانگ ماردی جس کے نتیجہ میں دونوں کمسن بہن بھائی جاں بحق ہوگئے ، اہل محلہ نے اپنی مدد آپ کے تحت خاتون کوزخمی حالت جبکہ دونوں بچوں کومردہ حالت میں کنوئیں سے نکال لیا ،رات گئے میتیں تحصیل ہیڈ کوارٹرز ہسپتال گوجرخان سے ظاہری پوسٹمارٹم کے بعد ورثاء کے سپرد کر دی گئیں،اس افسوسناک وقوعہ کے حوالہ سے گوجرخان پریس کلب کوملنے والی تفصیلات سے پتہ چلا ہے کہ اس بد قسمت جوڑے نے آٹھ سال قبل کورٹ میرج کی تھی ، اہلِ دیہہ کے مطابق تین سال قبل اسی خاندان کے زیر تعلیم ایک جوانسال بچے نے گھریلوحالات سے تنگ آکرگلے میں رسی کا پھندہ ڈال کر خود کشی کرلی تھی ۔