غیر ملکی سرمایہ کاری میں52فیصد اضافہ ،

4.76ارب ڈالر ہونا خوش آئند ہے‘میاں خرم الیاس بڑھتی ہوئی غیر ملکی سرمایہ کاری سے ملکی معیشت مستحکم ہوگی ،زرمبادلہ کے ذخائربڑھیں گے‘سابق وائس چیئرمین لاہور ٹائون شپ انڈسٹریز ایسوسی ایشن

جمعہ جون 13:12

غیر ملکی سرمایہ کاری میں52فیصد اضافہ ،
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 جون2018ء) تاجر راہنما و سابق وائس چیئرمین لاہور ٹائون شپ انڈسٹریز ایسوسی ایشن میاں خرم الیاس نے مئی کے مہینے میں18کروڑ 69لاکھ ڈالر کی سرمایہ کاری کے ساتھ پاکستان میں جولائی تا مئی غیر ملکی سرمایہ کاری میں52فیصد اضافہ کی ساتھ غیر ملکی سرمایہ کاری کی مالیت4ارب76کروڑ43لاکھ ڈالر ہونے کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ بڑھتی ہوئی غیر ملکی سرمایہ کاری سے ملکی معیشت مستحکم ہوگی اور ملک کے زرمبادلہ کے ذخائر میںاضافہ ہوگا ۔

(جاری ہے)

ان خیالات کا اظہار انہوںنے صنعتکاروں کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ میاں خرم الیاس نے کہا کہ براہ راست سرمایہ کاری میں چین سرفہرست ہے انہوںنے کہا کہ سی پیک اور سی پیک روٹس پر خصوصی اقتصادی زونز کے قیام اور ان میں غیر ملکی سرمایہ کاروں کو مراعات اور مفت زمین کی فراہمی سے دنیا بھر کے سرمایہ کار پاکستان میں سرمایہ کاری کیلئے منصوبہ بندی کررہے ہیں بڑھتی ہوئی غیر ملکی سرمایہ کار ی سے ملک میں نئی انڈسٹریز کا قیام عمل میں آئے گا جہاں ملازمتوں کے ہزاروں مواقع دستیاب ہونگے جس سے پڑھے لکھے نوجوانوں کو روزگار میسر آئے گا اور بے روزگاری کے مسئلہ کو حل کرنے میں بھی مدد ملے گی۔