عمران خان کی رہائش گاہ کے باہر پانچویں دن بھی احتجاج جاری رہا

سکندر بوسن کو پارٹی ٹکٹ الاٹ کرنا پارٹی کے کارکنان کو منظور نہیں ہے ،ْمظاہرین نیا پاکستان تب بنے گا جب صحیح افراد کو ٹکٹ ملے گا ،ْ گفتگو

جمعہ جون 16:37

عمران خان کی رہائش گاہ کے باہر پانچویں دن بھی احتجاج جاری رہا
اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 جون2018ء) چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان کی رہائش گاہ بنی گالہ میں پارٹی کارکنان کا احتجاج پانچویں دن بھی جاری رہا۔کارکنان نے عام انتخابات کے لیے پارٹی ٹکٹوں کی تقسیم کے خلاف دھرنا دے رکھا ہے ،ْان کارکنان کا تعلق این اے 154 ملتان اور این اے 12 بٹگرام سے ہے۔

(جاری ہے)

احتجاج کرنے والے کارکنوں کے مطابق انتخابات میں ٹکٹوں کی تقسیم کے دوران نظریاتی ورکرز کو نظر انداز کر دیا گیا ،ْ جب تک مطالبات پورے نہیں ہوتے، یہیں بیٹھیں گے۔

کیمپ میں ایک موقع پر جب یہ نغمہ چلایا گیا کہ جب آئے گا عمران ، بنے گا نیا پاکستان ،ْتو ایک کارکن نے بلند آواز میں کہا کہ نیا پاکستان تب بنے گا جب صحیح افراد کو پارٹی ٹکٹ دے گی۔انہوں نے کہا کہ سکندر بوسن کو پارٹی ٹکٹ الاٹ کرنا پارٹی کے کارکنان کو منظور نہیں ہے۔واضح رہے کہ چند روز قبل عمران خان نے اعلان کیا تھا کہ وہ مظاہرین کی بلیک میلنگ میں نہیں آئیں گے۔