سپریم کورٹ کا رینجرز کو سہیون ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی زمین پر قبضہ ختم کرانے کیلئے معاونت کا حکم

جمعہ جون 17:39

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 جون2018ء) سپریم کورٹ میں سہیون ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی زمین پر قبضہ سے متعلق کیس کی سماعت،،،،عدالت نے زمین پر قبضہ ختم کرنے کے لیے رینجرز کو اداروں کی معاونت کرنے کا حکم دے دیا ہے ۔جمعہ کو سپریم کورٹ رجسٹری میں سہیون ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی زمین پر قبضہ سے متعلق کیس کی سماعت ہوئی ۔ایڈیشنل ایڈووکیٹ جنرل سندھ نے قبضہ ختم کرانے سے متعلق 6 ہفتوں رپورٹ عدالت میں پیش کردی۔

(جاری ہے)

رپورٹ کے مطابق سہیون ڈویلپمنٹ اتھارٹی کی 640 ایکڑزمین میں 300 ایکڑسے قبضہ ختم کرادیا ہے،قبضہ مافیا بااثر ہیں، رینجرز کے بغیر آپریشن ممکن نہیں،دیگر زمین پر قبضہ ختم کرانے کے لیے رینجرز کی نفری فراہم کی جائے۔۔عدالت نے زمین پر قبضہ ختم کرنے کے لیے رینجرز کو اداروں کی معاونت کرنے کا حکم دے دیا۔ عدالت نے رینجرز حکام ایٹی انکروچمنٹ، پولیس اور دیگر اداروں کی مدد کریں۔ عدالت نے ڈی جی رینجرز کو مطلوبہ نفری فراہم کرنے کا حکم دے دیا۔