بلوچستان میں آئندہ انتخابات کے حوالے سے اپیلیٹ ٹربیونلز میں کاغذات نامزدگی مسترد ہونے کے خلاف اپیلوں کی سماعت

جسٹس ہاشم کاکڑ اور جسٹس اعجاز سواتی پر مشتمل دو ٹربیونلز نے متعدد امیدواروں کو انتخاب کی اجازت دیدی گئی

جمعہ جون 21:35

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 22 جون2018ء) بلوچستان ہائی کورٹ میں جسٹس ہاشم کاکڑ جسٹس اعجاز سواتی پر مشتمل دو ٹربیونلز نے اپیلوں کی سماعت کی، جسٹس ہاشم کاکڑ پر مشتمل اپیلیٹ بینچ نے پی بی 11 نصیر آباد سے امیدوار شاہ خان لہڑ ی کی کاغذا ت مستردہونے کیخلاف اپیل خارج کر دی ،امیدوار شاہ خان لہڑی کے کاغذات نامزدگی عمر کم ہونے کی بنا پر مسترد کئے گئے تھے ،پی بی 9 کوہلو سے آزاد امیدوار سا بق وزیر داخلہ نوابزادہ گزین مری کے کاغذات نامزدگی مسترد ہونے کے خلاف اپیل کی سما عت سابق صوبائی وزیر دا خلہ نوابزادہ گزین مری اپیلیٹ ٹربیونل میں فریقین کے وکلاء کے دلائل مکمل ہونے پر اپیلیٹ ٹربیونل نے اپیل پر فیصلہ محفوظ کر لیا ،نوبزا د ہ گزین مری کے کاغذات نامزدگی تجویز کنندہ اور تائید کنندہ کی عدم پیشی پر مسترد ہوئے تھے ،پی بی 13 جعفر آباد سے سا بق صوبائی وزیر فائق جمالی کی اپیل کی سماعت ہوئی ،سابق صوبائی وزیر فائق جمالی اور انکے وکیل امان اللہ کنرانی عدالت میں پیش ہوئے وکیل نے عدالت سے استدعا کی کہ معاملے میں سپر یم کورٹ کا فیصلہ آنے تک مہلت دی جائے ،اپیلیٹ ٹربیونل نے استدعا منظور کرتے ہوئے سماعت 27 جون تک ملتوی کردی ،سابق صوبائی وزیرداخلہ میرسرفرازبگٹی نے اپیلیٹ ٹربیونل میں نوابزادہ گہرام بگٹی کیخلاف اپیل دائر کردی ،نوابزادہ گہرام بگٹی نے کاغذات نامزدگی میں اثاثہ جا ت ظاہر نہیں کیے ،نوابزادہ گہرام بگٹی صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی بی 10ڈیرہ بگٹی سے امیدوار ہیں ،سابق وزیر داخلہ میرسرفراز بگٹی بھی اسی حلقے سے انتخابات میں حصہ لے رہے ہیں ،اپیلیٹ ٹربیونل نے ایم ایم اے کی امیدوار ثمینہ سعید کے کاغذات نامزدگی بحال کردیئے ،امیدوارثمینہ سعید کے کاغذات نامزدگی شوہرکے نام کے اندراج میں غلطی کی بنا پرمسترد ہوئے تھے ،پی بی 33 نوشکی اور پی بی 37 قلات سے آزاد امیدوار میر احمد مینگل کی اپیل کی بھی سماعت ،اپیلیٹ ٹربیونل نے امیدوار میر احمد مینگل کی اپیل پر فیصلہ محفوظ کرلیا ،پی بی 28 کوئٹہ 5 سے پشتو نخوا میپ کے امیدوار فاروق خلجی کی اپیل کی سماعت،، اپیلیٹ ٹربیونل نے پشتونخوا میپ کے امیدوار فاروق خلجی کو انتخا بات میں حصہ لینے کیلئے اہل قرار دے دیا ،فاروق خلجی کے کاغذات نامزدگی حلفیہ بیان جمع نہ کرانے پر مسترد کئے گئے تھے ،،پیپلز پارٹی کے صوبائی صدرعلی مدد جتک کی اپیل پر اپیلیٹ ٹربیونل میں سماعت ،جسٹس اعجازسواتی پر مشتمل اپیلیٹ ٹربیونل نے علی مدد جتک کی اپیل دوسرے ٹربیونل کو بجھوا دی ،پی بی 15 صحبت پور سے آزاد امیدوار راجہ رحیم ایڈوکیٹ انتخابات میں حصہ لینے کیلئے اہل قرار دیدیا ،اپیلیٹ ٹریبونل میں پی بی 22 قلعہ عبداللہ سے افغان قومی موومنٹ کے امیدوار احمد خان اچکزئی کو اہل قرار دے دیا ،امیدوار احمد خان اچکزئی کے کاغذات نامزدگی تائید کنندہ کے متعلقہ حلقے سے نہ ہونے کے باعث مسترد ہوئے تھے ،اپیلیٹ ٹربیونل نے امیدوار صدام حسین ایڈوکیٹ کو انتخابات میں حصہ لینے کیلئے اہل قرا ر دے دیا ،سابق صوبائی وزیر میرعاصم کردگیلو پی بی 35 مستو نگ سے سابق صوبائی وزیر میرعاصم کرد انتخابات میں حصہ لینے کے اہل قرار ،سابق صوبائی وزیر کے کاغذات نا مزدگی یوٹیلیٹی بلز ادا نہ کرنے پر مسترد کئے گئے تھے ،اپیلٹ ٹریبونل میں پی بی 11 نصیر آباد سے پیپلز پارٹی کے امیدوار ملک نصیر کو انتخابات میں حصہ لینے کا اہل قرار دے دیا ،ملک نصیر شاہ کے کاغذات نامزدگی زرعی ٹیکس جمع نہ کرانے پر مسترد کئے گئے تھے۔