آزاد امیدوار نے کھربوں کے اثاثے ظاہر کرکے سب کو حیران کردیا

مظفر گڑھ سے محمد حسین منا شیخ 4 کھرب 3 ارب 11 کروڑ کے اثاثوں کے مالک، ایک روپیہ ٹیکس نہیں دیا

ہفتہ جون 22:44

اسلام آباد (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 23 جون2018ء) مظفر گڑھ میں آزاد امیدوار میاں محمد حسین منا شیخ نے اپنے کاغذات نامزدگی میں کھربوں روپے کے اثاثے ظاہر کرکے سب کو حیران کردیا۔ منا شیخ کے کاغذات نامزدگی کے مطابق وہ 4 کھرب 3 ارب 11 کروڑ روپے کے اثاثوں کا مالک ہے لیکن اس نے ایک روپیہ ٹیکس نہیں دیا۔مظفرگڑھ کے امیدوار میاں محمد حسین منا شیخ قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 182 اور صوبائی اسمبلی کے حلقہ پی پی 270 سے آزاد امیدوار ہیں۔

قومی اسمبلی کے اسی حلقے سے حنا ربانی کھر،، جمشید دستی اور دیگر رہنما بھی حصہ لے رہے ہیں۔محمد حسین کے کاغذات میں ظاہر کردہ اثاثوں کی مالیت 4 کھرب 3 ارب 11 کروڑ روپے ہے جبکہ کاغذات نامزدگی کے مطابق منا شیخ نے کھربوں روپے کے اثاثوں پر ایک روپیہ بھی ٹیکس ادا نہیں کیا۔

(جاری ہے)

آزاد امیدوار میاں محمد حسین منا شیخ کا کہنا تھا کہ تحصیل مظفرگڑھ کے ملکیتی 5 مواضعات پر بااثر افراد نے محکمہ مال کی ملی بھگت سے قبضہ کیا تھا جس پر چیف جسٹس سپریم کورٹ نے 88 سال بعد ان کے خاندان کے حق میں فیصلہ دیا۔

منا شیخ کا کہنا تھا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے سے حاصل ہونے والی 5 مواضعات کی زمین کی قیمت کا تخمینہ 4 کھرب 3 ارب 11 کروڑ روپے ہے اور پانچوں قیمتی مواضعات پر قبضے کے لیے کوششیں کررہے ہیں۔تاہم اس وقت میاں محمد حسین کے پاس ایک کروڑ 40 لاکھ مالیت کا 14 مرلے کا مکان ہے۔ 9 کروڑ روپے مالیت کی 7 بیگھا اراضی اور ایک لینڈ کروزر ہے۔