ْچین، گزشتہ برس ایک لاکھ 15 ہزار مشکوک ملزمان گرفتار کر کے 50 ٹن منشیات قبضے میں لی گئی

منشیات کی اسمگلنگ ، فروخت اور نقل و حمل کے مجموعی طور پر ایک لاکھ سے زائد کیسز کو منطقی انجام تک پہنچایا گیا ، رپورٹ

پیر جون 13:14

بیجنگ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 جون2018ء) چین میں گزشتہ برس منشیات کی اسمگلنگ ، فروخت اور نقل و حمل کے مجموعی طور پر ایک لاکھ سے زائد کیسز کو منطقی انجام تک پہنچایا گیا ،ایک لاکھ پندرہ ہزار مشکوک ملزمان کو حراست میں لے کر پچاس ٹن منشیات قبضے میں لی گئی۔ چائنہ ریڈیو انٹرنیشنل کے مطابق چین میں انسداد منشیات کے قومی دفتر نے ملک میں منشیات کی روک تھام کے حوالے سے سال دو ہزار سترہ کی رپورٹ جاری کر دی ہے ۔

(جاری ہے)

جس کے مطابق گزشتہ سال چین میں انسداد منشیات کے حوالے سے نمایاں پیش رفت ہوئی ہے اور صورتحال قابو میں رہی ہے۔ رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ گزشتہ برس چین میں منشیات کی اسمگلنگ ، فروخت اور نقل و حمل کے مجموعی طور پر ایک لاکھ سے زائد کیسز کو منطقی انجام تک پہنچایا گیا ہے۔ایک لاکھ پندرہ ہزار مشکوک ملزمان کو حراست میں لیا گیا اور پچاس ٹن منشیات قبضے میں لی گئی ہیں۔رپورٹ کے مطابق چین کی انسداد منشیات کی قومی کمیٹی نے منشیات کی روک تھام کے حوالے سے ایک تین سالہ منصوبہ مرتب کیا ہے۔ منصوبے کے مطابق ملک سے منشیات کے خاتمے کے لیے تعلیمی منصوبہ جات عمل میں لائے جائیں گے اور منشیات سے متعلقہ جرائم کی نگرانی کا ایک جامع نظام قائم کیا جائے گا۔

متعلقہ عنوان :