شمالی شام میں فوجی قوت کا استعمال کیا جا سکتا ہے، شامی صدرکا عندیہ

پہلے شمالی شامی حصے کے باغیوں سے مصالحت کی ہر ممکن کوشش کی جائے گی،غیرملکی ٹی وی سے گفتگو

پیر جون 13:17

ْ دمشق(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 جون2018ء) شام کے صدر بشار الاسد نے کہا ہے کہ شمالی شام میں اٴْن کی حکومتی عملداری کو قائم کرنے کے لیے فوجی قوت کا استعمال کیا جا سکتا ہے۔پہلے شمالی شامی حصے کے باغیوں سے مصالحت کی ہر ممکن کوشش کی جائے گی۔

(جاری ہے)

غیرملکی خبررساں ادارے سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے یہ بھی کہا فوجی قوت صرف اٴْسی صورت میں استعمال کی جائے گی جب اس علاقے کے باغیوں نے ہتھیار ڈالنے سے انکار کیا۔اسد کے مطابق پہلے شمالی شامی حصے کے باغیوں سے مصالحت کی ہر ممکن کوشش کی جائے گی۔ یہ امر اہم ہے کہ شمالی عراق میں کرد فائٹرز کی تنظیم سیرین ڈیموکریٹک فورسز وسیع علاقے پر کنٹرول رکھتی ہے۔ اس تنظیم کو امریکی عسکری حمایت بھی حاصل ہے۔

متعلقہ عنوان :