دورہ زمبابوے، قومی کر کٹ ٹیم میں شان مسعود کی جگہ صاحبزادہ فرحان کا حیران کن انتخاب

رواں سال شان مسعود نے 6ون ڈے سنچریوں کی مدد سی1528رنز بنائے جس میں 10نصف سنچریاں بھی شامل ،صاحبزادہ فرحان نے پی ایس ایل کے پانچ میچوں میں صرف 91رنز اور پاکستان کپ میں صرف155رنزبنائے

پیر جون 13:56

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 جون2018ء) دنیا بھر میں ڈومیسٹک کرکٹ کو اہمیت دی جاتی ہے لیکن پاکستان میں قومی سیزن میں رنز کے ڈھیر لگانے والے شان مسعود کو غیر معمولی کارکردگی کے باوجود پاکستان ٹیم میں شامل نہیں کیا گیا۔بائیں ہاتھ کے اوپننگ بیٹسمین شان مسعود گزشتہ تین سال میں قومی ون ڈے ٹورنامنٹ میں 10 سنچریاں بنانے کے باوجود سلیکٹرز کو دونوں فارمیٹ میں متاثر نہیں کرسکے ہیں۔

رواں سال شان نے 6ون ڈے سنچریوں کی مدد سی1528رنز بنائے جس میں 10نصف سنچریاں بھی شامل ہیں۔ انہوں نے ایک سنچری ٹی ٹوئنٹی میں بھی اسکور کی تھی۔۔پاکستان میں قومی سلیکشن کمیٹی کی جانب سے اقربا پروری، ناانصافی اور میرٹ کے قتل عام کی کہانیاں زبان زد عام ہیں لیکن سلیکٹرز اور ٹیم انتظامیہ کسی بھی کھلاڑی کو ٹیم میں شامل کرنے کی وجہ بتانے سے ہمیشہ کنی کترا جاتے ہیں۔

(جاری ہے)

زمبابوے کے دورے کے لیے پاکستان کی جس ٹیم کا اعلان ہوا ہے اس میں نوجوان اوپنر صاحبزادہ فرحان کی شمولیت حیران کن ہے۔سب سے حیرت انگیز بات یہ ہے کہ صاحبزادہ فرحان کو پاکستان کی ٹی ٹوئنٹی ٹیم میں شامل کرنے کے لیے پی سی بی گورننگ بورڈ کے سب سے بااثر رکن منصور مسعود خان کے بیٹے شان مسعود کو شامل کرنے سے گریز کیا گیا۔اس بارے میں چیف سلیکٹر انضمام الحق سے ردعمل جاننے کی کوشش کی گئی لیکن انہوں نے فون اٹھانے سے گریز کیا۔

منصور خان، پی سی بی چیئرمین نجم سیٹھی کے قریب ہونے کے باوجود اپنے بیٹے کے ساتھ ہونے والی ناانصافی پر خاموش ہیں۔ڈومیسٹک کرکٹ میں شان مسعود کی کارکردگی ون ڈے ٹیم میں شامل امام الحق سے بھی بہتر ہے۔ شان کو دونوں فارمیٹ میں منتخب نہیں کیا گیا۔اس وقت پاکستانی سلیکشن میں سب سے طاقتور چیف سلیکٹر انضمام الحق اور ہیڈ کوچ مکی آرتھر ہیں جبکہ ان کے ساتھ کام کرنے والے دیگر لوگ محض اپنی نوکریاں کررہے ہیں۔

حیران کن طور پر22سالہ صاحبزادہ فرحان کو پاکستان ٹیم میں شامل کرنے کی وجہ بتانے سے گریز کیا گیا۔ صاحبزادہ فرحان نے پاکستان سپر لیگ کے پانچ میچوں میں اسلام آباد کی جانب سے 91رنز بنائے تھے۔صاحبزاہ فرحان نے پاکستان کپ ون ڈے ٹورنامنٹ میں پنجاب کی جانب سے کھیلتے ہوئے 155 رنز بلوچستان کے خلاف بنائے۔ اس کے بعد وہ 14،21اور 73رنز بنا سکے۔