ایڈوکیٹ بہن کے قتل کیس میں سوتیلے بھائی عدالتی احاطے سے گرفتار

پیر جون 17:17

جیکب آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 جون2018ء) ایڈوکیٹ بہن کے قتل کیس میں سوتیلے بھائی عدالتی احاطے سے گرفتار تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ ایند سیشن جج جیکب آباد کی عدالت میں ضمانت کی درخواست دینے والے لیاقت عمرانی اور میرل عمرانی کی ضمانت لینے سے انکار کرتے ہوئے کہا کہ کیس میں دہشت گردی کی دفعات ہیں اس لئے یہ کیس اانسداد دہشت گردی کی عدالت میں چلے گا جس پر قتل کیس کے نامزد ملزمان جیسے ہی عدالت سے باہر آئے پولیس نے دونوںکو گرفتار کر لیا یاد رہے کہ چند روز قبل جیکب آباد کے سٹی تھانہ کی حدود میں واقع ڈنگر محلہ میں مسلح افراد نے گھر میں گھس کر پانچ معصوم بچوں کی جو ایڈوکیٹ بتائی جاتی ہیں کو دو مسلح افرادنے گھر میں گھس کر فائرنگ کرکے قتل کر دیا تھا جس کا مقدمہ ورثہ کے نہ آنے پر پولیس کی جانب سے سوتیلے بھائیوں شفقت ،لیاقت اور میرل عمرانی کے خلاٖ ف درج کیا گیا تھا پولیس کے مطابق قتل کا سبب جائیداد کا تنازعہ بتایا جا رہا ہے یاد رہے کہ مقتولہ اپنے بھائی وقار عمرانی کے قتل کے کیس کی بھی پیروی کررہی تھی۔