بلوچستان کی سیاست میں خواتین کااہم رول ہے ،رہیسہ گچکی

ہم خواتین کوانکی معیاردلاکردم لینگے،بی اے پی جام کمال خان کی قیادت میں نئی پارٹی پارلیمنٹ میں حقوق کی جنگ لڑیگی،قلات میں مایوسی اورپسماندگی کے سوا کچھ نظرنہیں آرہا،مذہب کے نام پرووٹ لیکرعوام کااستحصال کیا گیا ہے اب کسی کوعوام کے حقوق پرڈاکہ ڈالنے کی اجازت نہیں دینگے، رہنما بی اے پی کی میڈیا سے گفتگو

پیر جون 22:15

قلات (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 جون2018ء) بلوچستان کی سیاست میں خواتین کااہم رول ہے خواتین کے حقوق کیلئے ہم میدان میں اتریں ہیں۔ہم خواتین کوانکی معیاردلاکردم لینگے۔بی اے پی جام کمال خان کی قیادت میں نئی پارٹی پارلیمنٹ میں حقوق کی جنگ لڑیگی۔قلات میں مایوسی اورپسماندگی کے سوا کچھ نظرنہیں آرہا۔مذہب کے نام پرووٹ لیکرعوام کااستحصال کیا گیا ہے۔

اب کسی کوعوام کے حقوق پرڈاکہ ڈالنے کی اجازت نہیں دینگے۔یہ بات بلوچستان عوامی پارٹی کی صوبائی رہنما رہیسہ گچکی نے قلات کلی گوم،کلی شادیزئی میں کارنر میٹنگزسے خطاب اورآئی این پی سے خصوصی گفتگوکرتے ہوئے کہی۔کارنرمیٹنگنز کے موقع پر خواتین کی بڑی تعدادنے بی اے پی کے صوبائی رہنما بی بی رہیسہ کی قیادت میں بی اے پی کے نامزد صوبائی اسمبلی کے امیدوارمیرضیا اللہ لانگو کی حمایت کااعلان کیا۔

(جاری ہے)

بی بی رہیسہ گچکی نے مزیدکہا کہ بلوچستان عوامی پارٹی عوام کی ترجمان پارٹی ہے بلوچستان عوامی پارٹی کے مرکزی صدرجام کمال خان عالیانی کی سربراہی میں نوجوان قیادت عوام کے حقوق کیلئے ایک نیاوژن لیکربرسرپیکارہے۔ہم دودھ اورشہدکی نہریں بہانے کے دعوے نہیں کرتیں اگرعوام نے ہمیں موقع دیا اورہماری پارٹی برسراقتدارآئی توہم عوام کوتمام تربنیادی سہولیات فراہم کرینگے۔

باالخصوص تعلیم ۔صحت۔ آبنوشی اسکیمات،روزگارکی فراہمی سمیت قلات اورصوبے کومثالی بنائیں گے۔مرکزی صدرجام کمال خان نے صوبہ بھرسے امیدوارنامزدکئے ہیں عوام بی اے پی کے نمائندوں کو کامیاب بنائیں۔ انہوں نے کہاکہ خواتین الیکشن مہم میں بڑھ چڑھ کر حصہ لے اور زیادہ سے ذیادہ ووٹ کاسٹ کرے تاکہ بلوچستان عوامی پارٹی کے امیدواروں کو بھاری اکثریت سے کامیاب بناکرحقیقی نمائندہ منتخب کرے۔

انہوں نے کہا کہ اگرپارٹی برسراقتدارآئی تومیری پہلی ترجیح قلات میں وومن یونیورسٹی کے کیمپس کاقیام کی کوشش ہوگی۔جبکہ خواتین اورطالبات کوتعلیم وصحت کے حوالے سے درپیش مسائل کے حل اورسہولیات کی فراہمی اولین ترجیحات ہونگی۔ہم صرف وعدے نہیں عملی جدوجہدکرینگے اور انشا اللہ بی اے پی عوام کو مایوس نہیں کریگی۔اورعوام کی طاقت سے بی اے پی بلوچستان بھرمیں کلین سوئپ کریگی۔