گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس نے نگراںحکومت پر عدم اعتماد کا اظہار ، نگراں حکومت پیپلز پارٹی کی حکومت کا تسلسل ہے، جی ڈی اے

صوبے بھر میں جیالے اور من پسند افسران کا جوتقرر کیا گیا جو کسی صورت قابل قبول نہیں ہے، الیکشن کمیشن کو خط

پیر جون 22:32

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 25 جون2018ء) گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس نے نگراںحکومت پر عدم اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے الزام عائد کیا ہے کہ وہ سندھ میں پیپلزپارٹی کی حکومت کا تسلسل ہے۔ جی ڈی اے کی جانب سے الیکشن کمیشن کو ایک احتجاجی خط ارسال کیا گیا ہے جس میں خبردار کیا گیا ہے کہ صوبے بھر میں جیالے اور من پسند افسران کا جوتقرر کیا گیا جو کسی صورت قابل قبول نہیں ہے۔

خط میں کہا گہا ہے کہ انتظامی عہدوں سمیت پولیس افسران کے تقرر کا کام پیپلزپارٹی کی حکومت میں مکمل کیا گیا نگران حکومت نے محض تقرر نامے جاری کئے۔ خط میں اس بات پر ضرور دیا گیا ہے کہ سیکریٹریز، کمشنرز، ڈپٹی کمشنرز اور پولیس افسران کے تبادلے پنجاب کی طرز پر اسٹبلشمنٹ ڈویژن کے تحت ہونے چاہییں۔

(جاری ہے)

جی ڈی اے نے اس بات پر حیرت کا اظہار کیا ہے کہ اکثریتی اے آر اوز کا تقرر محکمہ تعلیم سے کیا گیا حالانکہ محکمہ تعلیم کے بیشتر افسران نیب اور دیگر تفتیشی اداروں میں پیشیاں بھٴْگت رہے ہیں۔

مراسلے میں یہ بھی کہا گیا ہے کہ بلدیاتی اداروں کے سربراہان اور منتخب بلدیاتی عہدیداران پیپلزپارٹی کی الیکشن مہم چلانے میں مصروف ہیں۔ شفاف اور منصفانہ الیکشن کا انعقاد الیکشن کمیشن کی آئینی زمہ داری ہے جس میں اب تک وہ ناکام نظر آرہا ہے۔قبل از انتخابات دھاندلی کا سلسلہ زور و شور سے جاری ہے۔ جی ڈی اے نے الزام لگایا ہے کہ نگراں حکومت قبل از انتخابات دھاندلی کے زریعے پیپلزپارٹی کے لئے آئندہ حکومت کی راہ ہموار کررہی ہے۔ جی ڈی اے کی جانب سے کہا گیا ہے کہ شفاف اور منصفانہ الیکشن کے لئے ہمارے مطالبات پر عمل نہیں کیا جاتا تو ہم بھرپور احتجاج کا حق محفوظ رکھتے ہیں۔