ایران میں 1300 سے زائد مصنوعات کی درآمد پر پابندی کا فیصلہ

منگل جون 11:20

تہران ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 جون2018ء) ایران میں1300 سے زائد مصنوعات کی درآمد پر پابندی عائد کی جا رہی ہے۔۔جرمن نشریاتی ادارے کے مطابق صنعتوں اور تجارت کیایرانی وزیر محمد شریعت مداری نے 1,339 اشیاء کی ایک فہرست مرتب کی ہے، جن کی درآمد پر پابندی عائد کی جا رہی ہے۔

(جاری ہے)

ایران یہ قدم عوامی احتجاج کے سبب اور امریکی پابندیوں کے ملکی معیشت پر اثرات کو محدود رکھنے کے لیے اٹھایا جا رہا ہے۔

دارالحکومت تہران کے تاریخی گرینڈ بازار میں گزشتہ روز تاجروں نے غیر ملکی زر مبادلہ سے متعلق حکومتی پالیسیوں کے خلاف احتجاج کیا اور بیشتر دکانیں بند رکھیں۔ امریکی پابندیوں کے نتیجے میں ایرانی ریال کی قدر مسلسل گرتی جا رہی ہے اور بتدریج کمی کے بعد گزشتہ روز ریال کی قدر امریکی ڈالر کے مقابلے میں نوے ہزار ریکارڈ کی گئی، جو گزشتہ سال کے اختتام پر 42,890 تھی۔