لیبی ساحلی محافظوں نے 948تارکین وطن کو بچالیا،10لاشیں بھی برآمد

کوسٹ گارڈز نے غیر قانونی تارکینِ وطن کے مختلف گروپوں کو پکڑا ہے،ترجمان لیبی بحریہ کی گفتگو

منگل جون 12:50

طرابلس(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 جون2018ء) لیبیا کے ساحلی محافظوں نے بحر متوسط میں مختلف کارروائیوں میں 948 غیر ملکی تارکین وطن کو بچا لیا ہے اور دس لاشیں نکال لی ہیں۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق لیبیا کے ساحلی محافظوں نے گذشتہ ایک ہفتے کے دوران میں کم سے کم دوہزار تارکین وطن کو بچایا ہے۔ان میں زیادہ تر افریقی تارکین وطن ہیں اور وہ لیبیا سے کشتیوں یا چھوٹے جہازوں کے ذریعے بحر متوسط کے راستے اٹلی جانا چاہتے تھے۔

لیبیا کے مغربی ساحلی علاقے سے روزانہ ہی جنگ زدہ اور غربت زدہ ممالک سے تعلق رکھنے والے بیسیوں افراد پٴْر خطر سفر کے بعد یورپ میں پہنچنے کی کوشش کرتے ہیں لیکن گذشتہ سال جولائی میں لیبیا سے یورپ جانے والے غیر قانونی تارکین وطن کی تعداد میں نمایاں کمی واقع ہوئی ہے ۔

(جاری ہے)

تب اٹلی کے ساتھ ایک ڈیل کے تحت ایک مسلح گروپ نے انسانی اسمگلروں کو بحر متوسط سے اسمگلنگ کے مرکز سے نکال باہر کیا تھا جس کے بعد ان کی سرگرمیوں میں بھی کمی واقع ہوئی ہے۔

لیبیا کی بحریہ کے ترجمان ایوب قاسم نے برطانوی خبررساں ایجنسی کوبتایاکہ کوسٹ گارڈز نے غیر قانونی تارکینِ وطن کے مختلف گروپوں کو پکڑا ہے۔پہلا گروپ 97 افراد پر مشتمل تھا اور وہ ایک غبارہ کشتی پر سوار تھے۔ دوسرے گروپ میں 361 افراد شامل تھے اور وہ دو کشتیوں پر سوار تھے۔ان دونوں گروپوں میں 110 خواتین اور 70 بچے بھی شامل تھے۔انھیں ساحلی قصبے خمس لے جایا گیا ۔ایک عینی شاہد نے بتایا کہ غیر قانونی تارکین وطن کا تیسرا گروپ 490 افراد پر مشتمل تھا ۔انھیں قصبے قرابولی کی ساحلی حدود سے پکڑا گیا تھا۔ ان میں 75 بچے اور 20 خواتین شامل تھیں۔

متعلقہ عنوان :