احمد شہزاد اور عمراکمل کیساتھ اب کیا کرنا چاہیئے ، عامر سہیل نے بتا دیا

رویہ درست رکھنے کیلئے پی سی بی دونوں کو مسلسل نگرانی میں رکھے :سابق کپتان

منگل جون 13:18

احمد شہزاد اور عمراکمل کیساتھ اب کیا کرنا چاہیئے ، عامر سہیل نے بتا ..
لاہور(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔26جون 2018 ء) قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان عامر سہیل نے نوجوان کرکٹرز احمد شہزاد اور عمر اکمل کی جانب سے مسلسل ڈسپلن اور کوڈ آف کنڈکٹ کی خلاف ورزی پر پی سی بی کو مشورہ دیا ہے کہ انہیں بحالی پروگرام میں شامل رکھا جائے۔ گزشتہ روز ایک انٹرویو میں ان کا کہنا تھا کہ دونوں کھلاڑیوں کو مزاج کی درستگی کیلئے بحالی پروگرام کی ضرورت ہے اور پاکستان کرکٹ بورڈ کوچاہیئے کہ ان کرکٹرز کا رویہ درست کرنے کیلئے انہیں مسلسل نگرانی میں رکھا جائے۔

ایک سوال پرعامر سہیل نے پی سی بی کو مشورہ دیا کہ دونوں کھلاڑیوں کو ایک اور موقع دے کر انہیں گائیڈ کیا جائے ورنہ بہت دیر ہو جائے گی۔ان کا کہنا تھا کہ احمد شہزاد کو اپنی کارکردگی کے ساتھ رویہ بہتر بنانے کی بھی ضرورت ہے تاکہ وہ خود کو دوسرے نوجوان کرکٹرز کے سامنے رول ماڈل کے طور پر پیش کر سکیں اور انہیں اس معاملے پر سنجیدگی اختیار کرنا چاہئے۔

(جاری ہے)

عامر سہیل کا کہنا تھا کہ عمر اکمل کو بھی ٹریک پر واپس آنا چاہئے جو اپنی کارکردگی پر زیادہ توجہ دیں تاکہ اپنے کیریئر کو ختم ہونے سے بچا سکیں۔ واضح رہے کہ احمد شہزاد اور عمر اکمل نے ایک بار پھر خود کو نئی مشکلات سے دوچار کردیا ہے کیونکہ احمد شہزاد مثبت ڈوپ ٹیسٹ جبکہ عمر اکمل بکیز کے حوالے سے بیان دینے کی وجہ سے ممکنہ جرمانے اور پابندی کی زد میں ہیں اور ماضی میں بھی ان کا کوڈ آف کنڈکٹ کی خلاف ورزی کا ریکارڈ اچھا نہیں ہے۔۔عامر سہیل کا مزید کہنا تھا کہ دورہ زمبابوے کے لئے جن سکواڈز کا اعلان کیا گیا ہے انہیں دیکھ کر لگتا ہے کہ سلیکٹرز نے اس دورے پر کسی بھی قسم کا رسک نہیں لیا کیوں کہ محمد حفیظ اپنے تجربے کے باعث ٹیم میں توازن کیلئے منتخب ہوئے ہیں۔