پی ٹی آئی کے سابق ایم پی اے کی اساتذہ سے تلخ کلامی،

استاتذہ کے سابق دور کی کارکردگی پر تحفظات اساتذہ نے ووٹ دینے کو تعلیم پر توجہ دینے سے مشروط کر دیا، فضل کریم کیخلاف شدید نعرے بازی

منگل جون 15:12

سوات (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 جون2018ء) تحریک انصاف کے سابق ایم پی اے فضل حکیم کی الیکشن مہم کے دوران اساتذہ سے تلخ کلامی، اساتذہ نے ووٹ دینے کو تعلیم پر توجہ دینے سے مشروط کر دیا، فضل کریم کی سابق دور کی کارکردگی کے حوالے سے تحفظات کا اظہار کرتے ہوئے شدید نعرے بازی کی۔

(جاری ہے)

منگل کو تعلیم دو ووٹ لو کے نام سے ہونے والا سیمینار بدنظمی کا شکار ہو گیا، تحریک انصاف کے سابق ایم پی اے فضل حکیم اور اساتذہ کے درمیان تلخ کلامی ہو ئی، اساتذہ نے فضل حکیم کے خلاف شدید نعرے بازی کی، واضح رے کہ مینگورہ میں تعلیم کے حوالے سے تعلیم دو اور ووٹ لو کے نام سے یہ سیمینار کیا گیا تھا، سیمینار میں سوات کے مختلف پارٹیوں کے نامزد امیدواران کو مدعو کیا گیا، دوران سیمینار پی ٹی آئی کے رہنما فضل حکیم کی کارکردگی پر اعتراضات کئے گئے، جس پر فضل حکیم غصے میں آگئے، فضل حکیم نے مائیک پر اساتذہ کے خلاف باتیں کیں، جس کے باعث اساتذہ نے فضل حکیم کے خلاف شدید نعرے بازی کی، نعرے بازی کے بعد اساتذہ نے سابق ایم پی اے سے معافی کا مطالبہ کیا جس پر فضل حکیم نے معافی نہ مانگی اور اساتذہ حاصل سے چلے گئے۔