مقبوضہ کشمیر میں شہید سینئر صحافی شجاعت بخاری کی یاد میں تعزیتی ریفرنس ، بھارتی بربریت کی مذمت

شرکاء کا شہادت میں ملوث افراد کو بے نقاب کرنے اور کیفر کردار تک پہنچانے کا مطالبہ، شجاعت بخاری کے مشن کو جاری رکھنے کا عزم

منگل جون 16:00

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 جون2018ء) نیشنل پریس کلب اسلام آباد میں مقبوضہ کشمیر میں شہید ہونے والے سینئر صحافی شجاعت بخاری کی یاد میں تعزیتی ریفرنس کا انعقاد کیا گیا، ریفرنس میںمقبوضہ کشمیر میں بھارتی بربریت کی شدید الٖفاظ میں مذمت کرتے ہوئے شجاعت بخاری کی شہادت میں ملوث افراد کو بے نقاب کرنے اور ان کو کیفر کردار تک پہنچانے کا مطالبہ کیا گیا،شرکا نے ان عزم کا اعادہ کیا کہ وہ شجاعت بخاری کے مشن کو جاری رکھیں گے۔

منگل کو یہاں نیشنل پریس کلب اسلام آباد میں مقبوضہ کشمیر میں شہید ہونے والے سینئر صحافی شجاعت بخاری کی یاد میں تعزیتی ریفرنس کا انعقاد کیا گیا۔ تعزیتی ریفرنس میںصدر آذاد کشمیر سردار مسعود خان، ترجمان دفتر خارفہ ڈاکٹر محمد فیصل، صدر نیشنل پریس کلب طارق چوہدری، سیکریٹری نیشنل پریس کلب شکیل انجم ، سماجی کارکن اور حریت رہنما یاسین ملک کی اہلیہ مشعال ملک، سینیر صحافی حامد میر اور دیکر رہنمائوں نے شرکت کی۔

(جاری ہے)

تعزیتی ریفرنس میں اظہار خیال کرتے ہوئے شرکا نے شجاعت بخاری کی نجی زندگی اور جدوجہد آزادی کشمیر میں ان کے کردار پر روشنی ڈالی، ریفرنس میںمقبوضہ کشمیر میں بھارتی بربریت کی شدید الٖفاظ میں مذمت کرتے ہوئے شجاعت بخاری کی شہادت میں ملوث افراد کو بے نقاب کرنے اور ان کو کیفر کردار تک پہنچانے کا مطالبہ کیا گیا۔ ریفرنس میں شرکا نے ان عزم کا اعادہ کیا کہ وہ شجاعت بخاری کے مشن کو جاری رکھیں گے اور اس جدوجہد آزادی کو منطقی انجام تک پہنچانے کیلئے اپنی جان کی بازی کگانے سے بھی دریغ نہیں کریں گے۔