یونین ڈربنگ حلقہ چار کھاوڑہ کی ڈیڑھ کلو میٹر روڈ کا کام ادھواا چھوڑ کر ٹھیکیدار غائب

متعلقہ محکمہ اور ٹھیکیدار کی ملی بھگت، کام کیے بغیر لاکھوں روپے ہضم، قومی خزانے کو لاکھوں کی پھکی

منگل جون 16:01

مظفرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 جون2018ء) یونین ڈربنگ حلقہ چار کھاوڑہ کی ڈیڑھ کلو میٹر روڈ کا کام ادھواا چھوڑ کر ٹھیکیدار غائب، متعلقہ محکمہ اور ٹھیکیدار کی ملی بھگت، کام کیے بغیر لاکھوں روپے ہضم، قومی خزانے کو لاکھوں کی پھکی، تین سالوں میں ڈیڑھ کلو میٹر سڑک پختہ نہ ہونے سے عوام کو شدید مشکلات کا سامنا۔چند ماہ قبل وزیراعظم راجہ فاروق حیدر خان کے دورہ ڈربنگ کے موقع پر سڑک کی پختگی کا کام شروع کر کے پھر ٹھیکیدار رفو چکر ہو گیا عوام علاقہ نوراکبر، وقار نسیم، فرخ خورشید، زین اکبر نواب دین حبیب، خان افسر،لطیف ودیگر نے میڈیا کو تفصیلات بتاتے ہوئے کہا کہ یونین کونسل ڈربنگ حلقہ چار کھاوڑہ کی پنوں گلی تا چکیاں کھیتر ڈیڑھ کلو میٹر روڈ تین سالوں میں تعمیر نہیں ہو سکی۔

(جاری ہے)

سڑک پر پلیاں اور دیوار بندی بھی کسی ایک مقام پر بھی نہیں کی گئی۔دو سو فٹ سے بھی کم سولنگ کی گئی ہے۔دسمبر میں ٹھیکیدار کا موقف تھا کہ تارکول ڈالنے کا موسم نہیں۔۔وزیراعظم کے دورہ کے موقع پر مختلف مقامات پر دس سے بیس فٹ تارکول ڈال کر اداروں کو دھوکہ دیا گیا۔متعلقہ محکمے اور ٹھیکیدار کی ملی بھگت سے قومی خزانے کو لاکھوں کی پھکی دی جا رہی ہے۔ٹھیکیدار کام کیے بغیر مسلسل رقوم وصول کر رہا ہے۔۔وزیراعظم آزاد کشمیر، چیف سیکرٹری آزاد کشمیر،وزیر اوقاف، چیف انجینئر شاہرات اور دیگر ارباب اختیار سے مطالبہ کرتے ہیں کہ فوری ٹھیکیدار کی کرپشن کا نوٹس لیا جائے اور عوام علاقہ کو سڑک تعمیر کر کے مسائل سے نکالا جائے۔