کشمیری عوام کی جدوجہد آزادی کو نہیں کچلاجا سکتا، کشمیر میں کٹھ پتلیوں کے چہرے تبدیل کرنے سے زمینی حقائق پر کوئی اثر نہیں پڑے گا‘بھارت اپنے کٹھ پتلیوں کو استعمال کرکے یہاں کے لوگوں کو ہمیشہ دھوکہ دیتا رہا ہے

جموںو کشمیر ڈیمو کریٹک فریڈم پارٹی کے نظربند سربراہ شبیر احمد شاہ کا بیان

منگل جون 16:01

سرینگر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 26 جون2018ء) جموںو کشمیر ڈیمو کریٹک فریڈم پارٹی کے نظربند سربراہ شبیر احمد شاہ نے کہا ہے کہ مقبوضہ علاقے میں کٹھ پتلی حکمرانوں کی تبدیلی سے کوئی فرق نہیںپڑتاہے کیونکہ کشمیری عوام اس طرح کی سیاست سے ہمیشہ لاتعلق رہتے ہیں۔کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق شبیر احمد شاہ نے دہلی کی تہاڑ جیل سے ایک بیان میں کہا کہ بھارت کشمیر میں اپنے کٹھ پتلیوں کے چہرے تبدیل کرتا رہتا ہے تاہم اس سے زمینی حقائق پر کوئی اثر نہیں پڑتا اور کشمیری عوام کو اٴْن کے حق خود ارادیت سے مسلسل محروم رکھا جارہا ہے جس کو عالمی سطح پر تسلیم کیاجاچکا ہے۔

انہوں نے کہا کہ بھارت اپنے کٹھ پتلیوں کو استعمال کرکے یہاں کے لوگوں کو ہمیشہ دھوکہ دیتا رہا ہے۔ دریں اثناء فریڈم پارٹی کے ترجمان نے ایک بیان میں کہا ہے تہاڑ جیل میںشبیر احمد شاہ کی حالت دن بدن بگڑتی جارہی ہے۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا نظربند رہنما کے اہل خانہ کے مطابق شبیر احمد شاہ کی صحت انتہائی خراب ہے اور وہ چل پھر بھی نہیں سکتے۔ جیل حکام سینئر حریت رہنما کی زندگی کے ساتھ کھلواڑ کررہے ہیں تاہم ان کے حوصلے بلند ہیں۔

ترجمان نے ضلع کولگام کے علاقے چڈر میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں ایک اور نہتے نوجوان کے بہیمانہ قتل کی شدید مذمت کی ہے۔ انہوں نے سری گفوارہ کے زخمی نوجوان کے جاں بحق ہونے پر بھی گہرے دکھ کا اظہار کیا۔ ترجمان نے کہا کہ بھارت جموں وکشمیر میں نسل کشی کی پالیسی پر عمل پیرا ہے کیونکہ اٴْس کے مشیر لال سنگھ جیسے فرقہ پرست سیاستدان ہیں جو کھلے عام کشمیری صحافیوں کو قتل کرنے کی دھمکیاں دے رہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ کشمیری عوام کی جد و جہد آزادی کو کچلا نہیں جاسکتا اور نہ ہی آزادی پسند عوام کے جذبہ حریت کو ختم کیا جاسکتا ہے۔ترجمان نے حال ہی میں شہید ہونے والے نوجوانوں کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے ان کے اہل خانہ سے یکجہتی اور ہمدردی کا اظہار کیا۔